Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / بار بار سرور ڈاؤن سے راشن تقسیم میں رکاوٹ

بار بار سرور ڈاؤن سے راشن تقسیم میں رکاوٹ

کارڈ ہولڈرس اور راشن ڈیلرس کے لیے پریشانی کا سبب
حیدرآباد ۔ 24 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز ) : راشن تقسیم میں بدعنوانیوں پر روک لگانے کے لیے حکومت نے ای پاس سسٹم متعارف کیا ہے ( الیکٹرانک پائنٹ آف سیلس ) جو کارڈ ہولڈرس اور راشن ڈیلرس کے لیے سخت پریشانی کا باعث بن گیا ہے ۔ کارڈ ہولڈرس کو گھنٹوں لائن میں کھڑے رہنا پڑرہا ہے ۔ بار بار ’ سرور ڈاؤن ‘ کی وجہ سے کارڈ گیرندے راشن حاصل نہیں کرپارہے ہیں ۔ گزشتہ ماہ کے مقابلہ اس ماہ حالات مزید ابتر ہوگئے ہیں ۔ بعض راشن ڈیلرس کارڈ ہولڈرس کو راشن فراہم کیے بغیر غلط حسابات پیش کررہے تھے ، پولیس ریکارڈ کے مطابق صرف گریٹر کے احاطہ میں سالانہ 200 کروڑ کا راشن غیر قانونی طور پر فروخت پر کارروائی کرتے ہوئے روک تھام کے لیے ہی ای پاس سسٹم متعارف کیا ہے ۔ اور یہ عمل گریٹر میں کامیاب ہوگیا تو ساری ریاست میں شروع ہوگا اور کارڈ ہولڈرس کو ریاست کے کسی بھی راشن شاپ سے راشن حاصل کرنے کی سہولت ہوگی ۔ ای پاس مشن میں کارڈ ہولڈرس کے فنگر پرنٹس پر ہی کارڈ ہولڈرس کو راشن دیا جائے گا ۔ مگر چند دن سے ای پاس مشینوں میں بار بار خرابیاں پیدا ہورہی ہیں اور نٹ سگنلس نہ ملنے کی وجہ سے ای پاس کا عمل رک جاتا ہے اور عوام کو گھنٹوں نٹ سگنلس کے انتظار میں کھڑے رہنا پڑرہا ہے عوام اور راشن ڈیلرس کا کہنا ہے کہ بار بار سرور ڈاؤن ہونے کی وجہ سے بے حد پریشانی ہورہی ہے ای پاس سسٹم کا آغاز ہونے کے بعد صرف دو تین ماہ مشکلات پیش آئیں مگر بعد میں آسانی ہوئی تھی جو پھر دوبارہ گزشتہ ماہ سے بار بار ’ سرور ڈاؤن ‘ کا مسئلہ درپیش ہورہا ہے اتوار کے دن صبح 10تا 12 بجے سرور ڈاؤن رہنے سے گریٹر کے احاطہ میں عوامی نظام تقسیم ٹھپ پڑ گیا ۔ بار بار سرور ڈاؤن کی وجہ سے عوام کو گھنٹوں شاپس کے پاس کھڑے رہنا پڑتا ہے اس پریشانی کے عالم میں عوام راشن ڈیلرس پر سرور ڈاؤن کرنے کا الزام عائد کررہے ہیں ۔ جو راشن ڈیلرس کے لیے پریشان کن حالات ہیں ۔ راشن ڈیلرس کے مطابق ای پاس سسٹم کا عمل رک جانے پر اس سسٹم کو فراہم کرنے والی اتھاریٹی کو اطلاع دی جاتی ہے جن کی ذمہ داری ہے کہ 20 منٹ کے اندر ای پاس سسٹم کو بحال کریں مگر اتھاریٹی کی جانب سے بحال کرنے میں گھنٹوں گذر جارہے ہیں ۔ راشن ڈیلرس نے اس اتھاریٹی پر الزام عائد کیا ہے کہ خراب ہونے والے ای پاس مشن کی مفت میں تبدیلی کرنا ہے مگر تبدیلی کے لیے ڈیلرس سے پیسہ وصول کیا جارہا ہے اور اتھاریٹی کی یہ بھی ذمہ داری ہے کہ پیپر رولس مفت میں فراہم کرے مگر اتھاریٹی ایک پیپر رول کے لیے 16 روپئے وصول کررہی ہے ۔ اس کے برخلاف سیول سپلائی عہدیداران کا کہنا ہے کہ ایسے مسائل درپیش نہیں ہیں اگر کہیں ایسا ہو بھی جائے تو فوری درست کیا جارہا ہے ۔۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT