Saturday , November 18 2017
Home / کھیل کی خبریں / باکسنگ نیشنلز میں پسندیدہ باکسرز کی کوارٹرز میں رسائی

باکسنگ نیشنلز میں پسندیدہ باکسرز کی کوارٹرز میں رسائی

گوہاٹی ، 10 ڈسمبر (سیاست ڈاٹ کام ) ورلڈ چمپئن شپس برونز میڈل ونر شیوا تھاپا سخت مقابلے کے بعد کامیاب ہوئے، جب کہ ایشین سلور میڈلسٹ دیویندرو سنگھ نے کافی غلبہ والا مظاہرہ پیش کیا، اس طرح یہاں جاری سینئر مینس نیشنل باکسنگ چمپئن شپس میں پسندیدہ باکسرز نے متضاد کامیابیاں درج کرائیں۔ آج کوارٹرز میں سابق کامن ویلتھ گیمز گولڈ میڈلسٹ منوج کمار (69kg) اور سابق ایشین گیمز سلور میڈلسٹ دنیش کمار (91kg) بھی داخل ہوچکے ہیں۔ مقامی اسٹار شیوا جن کا لائٹ ویٹ (60kg) کیٹگری میں یہ اولین مسابقتی ٹورنمنٹ ہے، اُن کا سامنا سرویسیس اسپورٹس کنٹرول بورڈ کے منیش سے ہوا، جو شاید دن کا سب سے زیادہ پُرجوش اور توقعات کے عین مطابق مقابلہ ثابت ہوا۔ اس ٹورنمنٹ میں شائقین کی کم تعداد دیکھنے میں آئی ہے مگر آج ناظرین معقول تعداد میں دکھائی دیئے، جو 23 سالہ شیوا کے سبب ہوا، جنھوں نے منیش کے سخت چیلنج سے آخرکار اچھی طرح نمٹ لیا۔ درحقیقت ، ایسا مرحلہ بھی آیا جب دیگر باکسنگ رِنگ کی سرگرمی عملاً موقوف ہوگئی کیونکہ سلیکشن کمیٹی اور رِنگ کے آفیشلز کی توجہ وہاں مبذول ہوگئی جہاں شیوا پُرکشش مسابقت کررہے تھے۔ دونوں باکسروں نے مقابلے کے ناظرین کو مایوس نہیں کیا اور بھرپور مسابقت کی، جس میں بازی کبھی اِدھر تو کبھی اُدھر ہوتی رہی۔ اوپننگ راؤنڈ واضح طور پر سابق ایشین چمپئن کے حق میں چلا گیا، مگر منیش نے سکنڈ راؤنڈ میں واپسی کی۔ تاہم شیوا نے جو دو مرتبہ کے اولمپین بن چکے ہیں، قطعی تین منٹ میں اپنے معیارِ کھیل کو بلند کیا اور معاملہ 4-1 کے اسکور پر ختم کیا۔ نہایت تھکن آمیز مقابلے کے اختتام پر دونوں باکسروں نے ایک دوسرے کو گرمجوشی سے گلے لگایا، جو شاید ایک دوسرے کی محنت کا اعتراف ہوا۔ اس کے برخلاف دیویندرو (52kg) اترکھنڈ کے اروند کے خلاف اپنے مقابلے میں پوری طرح غالب رہے۔ اُن کی برتری کا اندازہ اس بات سے لگایا جاسکتا ہے کہ اروند کو دو مرتبہ میچ ریفری کی جانب سے آٹھ تک گنتی کا سامنا ہوا، یہاں تک کہ ججوں نے دیویندرو کے حق میں 5-0 کی رولنگ دے دی۔ منوج نے میگھالیہ کے تیلوک بودھا کی سخت مزاحمت کے باوجود 5-0 سے کامیاب ہوئے۔

TOPPOPULARRECENT