Tuesday , April 24 2018
Home / دنیا / برطانوی آبدوز شام کیلئے روانہ، تھریسامے کا اجلاس

برطانوی آبدوز شام کیلئے روانہ، تھریسامے کا اجلاس

لندن، 12 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) برطانوی وزیر اعظم تھریسامے نے امریکی کی قیادت میں شام میں کسی بھی طرح کے فوجی متبادل پر تبادلہ خیال کرنے آج اپنی کابینہ کا اجلاس طلب کیا۔ امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ نے چہارشنبہ کو روس کو دھمکی آمیز لہجے میں کہا تھا کہ شام کے خلاف کارروائی کی جا سکتی ہے اور شامی صدر بشار الاسد کا ساتھ دینے کے لئے روس کی مذمت بھی کی تھی۔بی بی سی کے مطابق اس اجلاس میں محترمہ مئے شام کے خلاف فوجی کارروائی کی منظوری دے سکتی ہیں اور اس میں انہیں پارلیمنٹ کی اجازت کی ضرورت نہیں ہے ۔ دی ٹیلیگراف کے مطابق م ٹریسا مئے نے برطانوی آبدوزوں کو شامی سرحد کے قریب جانے کا حکم دیا ہے تاکہ شامی فوج کے خلاف حملوں کو انجام دیا جا سکے ۔ اسکائی نیوزنے بتایا کہ آج ہونے والی میٹنگ میں وزیر اعظم اپنے وزرا کو شام کے خلاف کارروائی میں شامل ہونے کے قرارداد کو منظوری دینے کے لئے کہہ سکتی ہیں اور اس کارروائی کے لئے ان کو پارلیمنٹ میں کسی قانون کے تحت منظوری کی ضرورت نہیں ہے ۔اس سے پہلے ان کے پیشرو ڈیوڈ کیمرون 2013میں شام کے خلاف فوجی کارروائی کے لئے ممبران پارلیمنٹ کی حمایت حاصل کرنے میں ناکام رہے تھے ۔پارلیمنٹ میں اپوزیشن پارٹی لیبر پارٹی کے رہنما جرمی کاربن نے کل بیان دیا تھا کہ وہ شام کے خلاف جو بھی فوجی کارروائی چاہتی ہیں اس میں پارلیمنٹ کی بھی رائے لینی چاہئے۔

TOPPOPULARRECENT