Sunday , September 23 2018
Home / شہر کی خبریں / برقی اور آبپاشی پراجکٹس میں بے قاعدگیوں کا ثبوت عدالت میں پیش کرنے پر زور

برقی اور آبپاشی پراجکٹس میں بے قاعدگیوں کا ثبوت عدالت میں پیش کرنے پر زور

اپوزیشن جماعتوں کو وزیر آئی ٹی کے ٹی راما راؤ کا چیلنج

حیدرآباد۔ 13جنوری (سیاست نیوز) وزیر انفارمیشن ٹیکنالوجی کے ٹی راما رائو نے اپوزیشن جماعتوں کو چیلنج کیا کہ اگر برقی شعبہ اور آبپاشی پراجیکٹس کے سلسلہ میں بے قاعدگیوں کا ثبوت ان کے پاس موجود ہو تو وہ عدالت سے رجوع ہوں۔ کے ٹی آر نے کہا کہ کسانوں کو 24 گھنٹے برقی سربراہی کے آغاز کو اپوزیشن جماعتیں برداشت نہیں کرپارہی ہیں۔ کانگریس اور تلگودیشم دور حکومت میں کبھی بھی زرعی شعبہ کو 24 گھنٹے مفت برقی سربراہ نہیں کی گئی۔ انہوں نے کہا کہ برقی، پانی، سرمایہ کاری اور فلاحی اسکیمات پر عمل آوری کے سلسلہ میں ٹی آر ایس حکومت نے جو کارنامہ انجام دیا وہ اپوزیشن کے بس کی بات نہیں ہے۔ ایسے قائدین جو جیل جاچکے ہیں آج وہی اخلاقیات اور اصول پسندی کا درس دے رہے ہیں۔ حکومت پر بے قاعدگیوں اور بدعنوانیوں میں ملوث ہونے کا الزام عائد کرنے کے بجائے اگر اس بارے میں ثبوت ہو تو اپوزیشن کو عدالت سے رجوع ہونا چاہئے۔ کے ٹی آر نے الزام عائد کیا کہ اسمبلی میں مباحث سے فرار اختیار کرنے والے اسمبلی کے باہر گڑبڑ کررہے ہیں۔ حکومت نے اسمبلی کے سرمائی اجلاس میں تمام موضوعات پر مباحث کا اہتمام کیا تھا اس وقت اپوزیشن نے فرار کا راستہ اختیار کیا اور اب حکومت پر الزام تراشی کررہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ پنچایت راج سے متعلق حکومت کے مجوزہ قانون کی تیاری سے قبل وسیع تر مباحث کیے جائیں گے۔ انہوں نے کہا کہ ماحولیاتی کلیئرنس ملنے کے بعد ہی فارماسٹی کے تعمیری کاموں کا آغاز کیا جائے گا۔ کے ٹی آر عالمی تجارتی ادارے کے اجلاس میں شرکت کے لیے چار روزہ بیرونی دورے پر روانہ ہورہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ اس دورے کے موقع پر وہ تلنگانہ میں سرمایہ کاری کے سلسلہ میں مختلف اداروں سے مذاکرات کریں گے۔ کے ٹی آر نے کلکٹرس اور سپرنٹنڈنٹس آف پولیس کو ہدایت دی ہے کہ ریت کی غیر قانونی منتقلی میں ملوث افراد کے خلاف سخت کارروائی کی جائے۔ انہوں نے ویڈیو کانفرنس کے ذریعہ عہدیداروں سے خطاب کیا۔ انہوں نے مختلف ترقیاتی اسکیمات کے سلسلہ میں تجاویز پیش کیں۔ انہوں نے کہا کہ عوام کی ضرورت کے مطابق ریت کی دستیابی کو یقینی بنایا جائے اور قیمتوں پر کنٹرول کیا جائے۔ انہوں نے کہا کہ حکومت کے ترقیاتی کاموں کی تکمیل کے لیے ریت کی قلت نہیں ہونی چاہئے۔ لہٰذا غیر قانونی منتقلی میں ملوث افراد کے خلاف کارروائی کی جائے۔

TOPPOPULARRECENT