Saturday , November 25 2017
Home / Top Stories / برہان وانی کی برسی پر آبائی ٹاؤن میں کرفیو

برہان وانی کی برسی پر آبائی ٹاؤن میں کرفیو

دیگر جگہوں پر تحدیدات ،کشمیر میں سڑکیں سنسان، ریلوے خدمات معطل

سرینگر 8 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) عسکری کمانڈر برہان وانی کی پہلی برسی کے موقع پر ریالی منعقد کرنے علیحدگی پسندوں کے منصوبے کو ناکام بنانے کی خاطر حکام نے 3 ٹاؤنس میں کرفیو نافذ کردیا اور بقیہ کشمیر میں سخت تحدیدات عائد کردیئے ہیں۔ عہدیداروں نے کہاکہ پولیس اور نیم فوجی دستے سارے کشمیر میں بڑی تعداد میں متعین کردیئے گئے اور انٹرنیٹ سرویس منقطع کردی گئی تاکہ لاء اینڈ آرڈر برقرار رکھا جاسکے۔ علیحدگی پسندوں کی جانب سے بند کی اپیل اور حکام کی جانب سے کرفیو جیسی تحدیدات لاگو کرنے کے سبب وادی میں معمول کی زندگی مفلوج ہوگئی ہے۔ ایک سینئر پولیس عہدیدار نے کہاکہ ضلع پلوامہ میں برہان وانی کے آبائی ٹاؤن ترال میں کرفیو احتیاطی طور پر لگایا گیا ہے۔ مشترکہ علیحدگی پسند کیمپ بشمول حریت کانفرنس کے دونوں گروپ جن کی قیادت سید علی شاہ گیلانی اور میر واعظ عمر فاروق کرتے ہیں، نیز یٰسین ملک زیرقیادت جے کے ایل ایف نے عوام سے ترال تک مارچ کرنے کی اپیل کی ہے جو یہاں سے تقریباً 36 کیلو میٹر ہے۔ علیحدگی پسندوں کا منصوبہ تھا کہ برہان وانی کو خراج عقیدت اس طرح پیش کیا جائے گا جسے گزشتہ سال آج ہی کے دن سکیورٹی فورسیس کے ساتھ انکاؤنٹر میں ہلاک کیا گیا ہے۔ پولیس عہدیدار نے کہاکہ کرفیو جنوبی کشمیر کے شوپیان ٹاؤن اور شمالی کشمیر کے ضلع کپواڑہ کے تریہگام میں بھی نافذ کیا گیا ہے۔ وادی کے دیگر جگہوں پر عوام کی نقل و حرکت پر سخت تحدیدات لگائے گئے تھے۔ وادی کی موجودہ صورتحال کے تناظر میں امرناتھ یاترا جموں میں بھگوتی نگر بیس کیمپ سے تااحکام ثانی معطل کردی گئی ہے۔ تاہم یہ یاترا کشمیر میں پہلگام اور بلتال بیس کیمپ سے جاری ہے۔ جموں سے یاتری پہلگام یا بلتال بیس کیمپ پہونچ رہے ہیں اور وہاں سے غار والی مندر کو جائیں گے۔ آج طح شدہ تمام یونیورسٹی امتحانات ملتوی کردیئے گئے۔ قبل ازیں اِس ہفتے اسکولوں کو بند کردیا گیا تھا۔ عہدیدار نے بتایا کہ دوکانات اور کاروباری ادارے بدستور بند ہیں جبکہ گاڑیاں سڑکوں سے غائب ہیں۔ مجموعی طور پر صورتحال ابھی تک پرامن ہے۔ اسی دوران وادی کشمیر میں ریل خدمات ہفتہ کو مسلسل دوسرے دن بھی معطل رہیں۔ یہ خدمات جمعہ کو حزب المجاہدین کمانڈر برہان وانی کی پہلی برسی کے حوالے سے علیحدگی پسند قیادت کے احتجاجی پروگرام کے پیش نظر معطل کردی گئی تھیں۔ علیحدگی پسند قیادت نے آج (ہفتہ کو) برہان وانی کی برسی کے موقع پر مکمل و ہمہ گیر ہڑتال کے ساتھ ساتھ ترال چلو کی اپیل کی تھی۔ چنانچہ
انتظامیہ نے وادی کے سبھی حساس علاقوں میں کرفیو جبکہ باقی ماندہ علاقوں میں دفعہ 144 سی آر پی سی کے تحت چار یا زائد افراد کے ایک جگہ جمع ہونے پر پابندی عائد کی ہے۔

 

TOPPOPULARRECENT