Tuesday , January 23 2018
Home / عرب دنیا / بشارالاسد کے ایک با اثر رشتہ دار کا قتل

بشارالاسد کے ایک با اثر رشتہ دار کا قتل

بیروت 14 مارچ ( سیاست ڈاٹ کام ) شام کے صدر بشار الاسد کے ایک با اثر رشتہ دار کو ایک طاقتور سرکاری اثر والے علاقہ کے کنٹرول سے متعلق تنامعہ پر قتل کردیا گیا ۔ کہا گیا ہے کہ محمد الاسد نامی بشار الاسد کے رشتہ دار ایک وقت میں اسمگلنگ کیلئے شہرت رکھتے تھے ۔ انہیں کل لٹاکیہ صوبہ میں گولی مار کر ہلاک کردیا گیا ۔ شامی حقوق انسانی گروپ یہ نے بات

بیروت 14 مارچ ( سیاست ڈاٹ کام ) شام کے صدر بشار الاسد کے ایک با اثر رشتہ دار کو ایک طاقتور سرکاری اثر والے علاقہ کے کنٹرول سے متعلق تنامعہ پر قتل کردیا گیا ۔ کہا گیا ہے کہ محمد الاسد نامی بشار الاسد کے رشتہ دار ایک وقت میں اسمگلنگ کیلئے شہرت رکھتے تھے ۔ انہیں کل لٹاکیہ صوبہ میں گولی مار کر ہلاک کردیا گیا ۔ شامی حقوق انسانی گروپ یہ نے بات بتائی ۔ لٹاکیہ صوبہ بشارالاسد کے علوی برادری کے اثر والا سمجھا جاتا ہے ۔ حقوق انسانی گروپ کے ڈائرکٹر رمی عبدالرحمن نے بتایا کہ محمد الاسد کو جو قرداحہ گاؤں میں سر میں پانچ گولیاں مار کر ہلاک کردیا گیا ۔ وہ شامی صدر کے رشتہ کے بھائی کے فرزند تھے ۔ انہوں نے بتایا کہ ابھی حملہ آور کا پتہ نہیں چل سکا ہے تاہم قرداحہ گاؤں پر کنٹرول کے مسئلہ پر جو تنازعہ پیدا ہوا تھا یہ قتل اسی کا نتیجہ ہے ۔ شام کے سرکاری ذرائع ابلاغ میں اس قتل کی کوئی اطلاع نہیں دی گئی ہے ۔ یہ گروپ اسمگلنگ اور نشیلی ادویات کے کاروبار کے ذریعہ وسعت اختیار کرتا گیا تھا ۔ محمد الاسد کو ’ شیخ الجبل ‘ کے نام سے بھی جانا جاتا تھا اور انہوں نے 1989 سے 1994 کے دوران کافی دولت جمع کرلی تھی ۔ اس کے بعد وہ قرداحہ علاقہ میں کاروبار میں مصروف تھے ۔

TOPPOPULARRECENT