Thursday , December 13 2018

بغداد میں دوہرا خودکش بم حملہ،38 افراد ہلاک

بغداد ۔ 15 جنوری (سیاست ڈاٹ کام) بغداد میں آج دوہرے خودکش بم دھماکہ میں 38 افراد ہلاک ہوگئے۔ گذشتہ تین دنوں میں خودکش حملہ کا یہ دوسرا واقعہ ہے۔ دریں اثناء مشرقی بغداد کے ہیلتھ چیف ڈاکٹر عبدالغنی السعدی نے بھی ہلاکتوں کی تعداد 38 اور زخمی ہونے والوں کی تعداد 90 بتائی ہے۔ دوسری طرف جوائنٹ آپریشنس کمانڈ جس میں فوج اور پولیس بھی شامل ہے، کے ترجمان جنرل سعدمان نے بتایا کہ دو خودکش بم حملہ آوروں نے خود کو دھماکہ سے اڑا لیا۔ یہ واقعہ طیاران اسکوائر میں رونما ہوا جو ایک مصروف چوک ہے جہاں صبح سے ہی مختلف کام حاصل کرنے کیلئے لیبرس کی ایک کثیر تعداد موجود ہوتی ہے جہاں لوگ اپنی ضرورتوں کے مطابق آکر ان سے خدمات کا معاوضہ طئے کرکے اپنے مکان یا دوکان لے جاتے ہیں۔ اس نوعیت کا چلن ہندوستان کے متعدد شہروں میں بھی رائج ہے۔ یاد رہیکہ طیاران اسکوائر میں قبل ازیں بھی خودکش حملے ہوچکے ہیں۔ اب تک ان دوہرے حملوں کی ذمہ داری کسی بھی فرد یا تنظیم نے قبول نہیں کی ہے تاہم عراق میں اس نوعیت کے بیشتر حملوں میں دولت اسلامیہ ہی ملوث رہی ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT