Wednesday , January 17 2018
Home / ہندوستان / بنگال میں فرقہ پرستوںکی آمد، ٹی ایم سی ذمہ دار : سی پی ایم

بنگال میں فرقہ پرستوںکی آمد، ٹی ایم سی ذمہ دار : سی پی ایم

کولکتہ۔ 18 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) ترنمول کانگریس پر بنگال میں فرقہ پرست طاقتوں کو لانے کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے سی پی آئی ایم کے سینئر قائد سیتا رام یچوری نے آج کہا کہ ٹی ایم سی جس نے ریاست میں فرقہ پرستی کے خطرہ کو لایا ہے، اب اس سے جنگ کرنے کی باتیں کررہی ہے۔ انہوں نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اگر فرقہ پرست طاقتیں ریاست

کولکتہ۔ 18 نومبر (سیاست ڈاٹ کام) ترنمول کانگریس پر بنگال میں فرقہ پرست طاقتوں کو لانے کا ذمہ دار قرار دیتے ہوئے سی پی آئی ایم کے سینئر قائد سیتا رام یچوری نے آج کہا کہ ٹی ایم سی جس نے ریاست میں فرقہ پرستی کے خطرہ کو لایا ہے، اب اس سے جنگ کرنے کی باتیں کررہی ہے۔ انہوں نے ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اگر فرقہ پرست طاقتیں ریاست میں آئی ہیں تو اس کی کیا وجہ ہے؟ اس کا موقع ترنمول کانگریس نے دیا تھا۔ وہ ماضی میں بی جے پی کے ساتھ ترنمول کانگریس کے اتحاد کا حوالہ دے رہے تھے۔ انہوں نے کہا کہ ٹی ایم سی نے اس کے ساتھ اتحاد کیا تھا۔ یہی وجہ ہے کہ فرقہ پرستی کا خطرہ ریاست میں پھیل گیا۔ ترنمول کانگریس جس نے یہ خطرہ ریاست میں لایا ہے ، اب اس کے خلاف جدوجہد کی بات کررہی ہے۔ ترنمول کانگریس کی سربراہ ممتا بنرجی نے کل نشاندہی کی تھی کہ وہ بائیں بازو کے ساتھ فرقہ پرست طاقتوں پر قابو پانے کی کسی بھی بات چیت کی مخالف نہیں ہے۔ 125 ویں جواہر لال نہرو کی یوم پیدائش تقریب میں شرکت کرنے کے بارے میں سی پی آئی ایم قائد نے کہا کہ یہ شرکت جدید ہندوستان کی تعمیر کے لئے نہرو کی دین کی یادگار منانے کے لئے تھی۔ ہمارا کوئی دوسرا پروگرام نہیں تھا۔ کانگریس کے ساتھ اتحاد کرنے کا کوئی امکان نہیں ہے۔ انہوں نے کہا کہ بائیں بازو ریاست میں سیکولرازم کی برقراری اور فرقہ وارانہ ہم آہنگی برقرار رکھنے میں بڑا کردار ادا کرچکا ہے۔ فرقہ پرست طاقتوں سے مقابلہ کے لئے کانگریس سے اتحاد کا سوال ہی پیدا نہیں ہوتا۔

TOPPOPULARRECENT