Friday , December 15 2017
Home / دنیا / بنگلہ دیش : روہنگیا پناہ گزین4لاکھ30ہزار،مزید اضافہ ناممکن

بنگلہ دیش : روہنگیا پناہ گزین4لاکھ30ہزار،مزید اضافہ ناممکن

ڈھاکہ، 24 ستمبر (سیاست ڈاٹ کام)میانمار میں تشدد کی وجہ سے ترک وطنکر کے بنگلہ دیش پہنچے روہنگیا مسلم پناہ گزینوں کی تعداد تقریبا چار لاکھ 30 ہزار پر مستحکم ہو گئی ہے اور اس میں مزید اضافے کا امکان نہیں ہے ۔ اقوام متحدہ کے دفتر نے کل یہ اطلاع دی۔بین شعبہ جاتی تعاون گروپ نے اعداد و شمار جاری کرتے ہوئے ایک بیان میں کہا کہ جمعرات کو جاری تازہ ترین رپورٹ کے بعد سے اس تعداد میں کوئی تبدیلی نہیں ہوئی ہے ۔ اس وقت تک چار لاکھ 29 ہزار روہنگیا بنگلہ دیش پہنچے تھے ۔ بنگلہ دیش میں واقع اقوام متحدہ کے دفتر نے پہلے کہا تھا کہ آنے والے ہفتوں میں دو لاکھ یا تین لاکھ تک پناہ گزینوں کی تعداد میں اضافے سے انکار نہیں کیا جا سکتا کیونکہ ہزاروں روہنگیا میانمار سے بنگلہ دیش سرحد پار کرنے کے لئے انتظار کر رہے ہیں۔ اقوام متحدہ کے انسانی حقوق کے ہائی کمشنر نے کہا تھا کہ میانمار میں روہنگیا کمیونٹی کی ‘نسلی صفائی’ ہو سکتی ہے ۔

بنگلہ دیش میں روہنگیا پناہ گزینوں کے موبائیل فون پر امتناع
ڈھاکہ ۔ 24ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) بنگلہ دیش نے مواصلاتی کمپنیوں کو روہنگیا پناہ گزینوں کو موبائیل فون کنکشن دینے سے منع کردیا ہے ‘ جس کی وجہ صیانتی اندیشے ہیں ۔ بنگلہ دیش کی چار موبائیل کمپنیوں کو دھمکی دی گئی ہے کہ اگر وہ تقریباً چار لاکھ 30ہزار نئے آنے والے میانماری پناہ گزینوں کو فون کے منصوبوں کے بارے میں بتائیں جو کہ امتناع عائد کرنے کے وقت جاری تھے تو ان پر جرمانہ عائد کیا جائے گا ۔ کل فیصلہ کیا گیا تھا کہ پناہ گزین کمپنیاں بے وطن مسلم پناہ گزینوں کو موبائیل فون خدمات منقطع کردیں گے ۔ اسے صیانتی وجوہات کی بناء پر جائز اقدام قرار دیا گیا ہے ۔ قبل ازیں بنگلہ دیش پہلے ہی سم کارڈس کی فروختگی پر امتناع عائد کرچکا ہے اور اس کیلئے سرکاری شناختی کارڈ پیش کرنے کا لزوم عائدکیا گیا ہے جس کی وجہ سے دیسی عسکریت پسندوں کے تنظیمی حوصلے پست ہوگئے ہیں اور وہ مایوس ہوچکے ہیں ۔

 

TOPPOPULARRECENT