Saturday , December 15 2018

بنگلہ دیش میں ہوجی کے 8 ارکان کو سزائے موت

ڈھاکہ ۔ 23 جون (سیاست ڈاٹ کام) حرکت الجہاد الاسلامی (ہوجی) کے آٹھ عسکریت پسندوں بشمول اس کے سربراہ کو آج بنگلہ دیش کی ایک عدالت نے بنگالی سالِ نو کی تقاریب کو نشانہ بناتے ہوئے 2001ء میں کئے ہوئے ایک بم حملے کا مجرم قرار دیتے ہوئے انہیں سزائے موت سنا دی۔ اس حملے میں 10 جانیں ضائع ہوئی تھیں۔ زبردست حفاظتی انتظامات کے تحت قائم عدالت میں صدر م

ڈھاکہ ۔ 23 جون (سیاست ڈاٹ کام) حرکت الجہاد الاسلامی (ہوجی) کے آٹھ عسکریت پسندوں بشمول اس کے سربراہ کو آج بنگلہ دیش کی ایک عدالت نے بنگالی سالِ نو کی تقاریب کو نشانہ بناتے ہوئے 2001ء میں کئے ہوئے ایک بم حملے کا مجرم قرار دیتے ہوئے انہیں سزائے موت سنا دی۔ اس حملے میں 10 جانیں ضائع ہوئی تھیں۔ زبردست حفاظتی انتظامات کے تحت قائم عدالت میں صدر مفتی عبدالحنان اور دیگر 7 افراد کو مجرم قرار دیتے ہوئے ایڈیشنل میٹرو پولیٹن جج روح الامین نے فیصلہ سنایا کہ انہیں اُس وقت تک پھانسی پر لٹکایا جائے جب تک وہ فوت نہ ہوجائیں۔ یہ حملہ ملک کو غیرمستحکم کرنے اور دہشت پھیلانے کیلئے کیا گیا تھا۔ دیگر 6 افراد کو سزائے قید سنائی گئی جن میں سے 3 مفرور ہیں۔ حنان اور دیگر 7 ملزموں نے گرفتاری کے بعد مقدمہ کا سامنا کیا تھا۔ کئی پولیس کاروں کی حفاظت میں قید خانہ سے عسکریت پسندوں کو عدالت منتقل کیا گیا تھا۔

TOPPOPULARRECENT