Friday , September 21 2018
Home / عرب دنیا / بن غازی کے اہم ہوائی اڈے پر راکٹوں سے حملہ

بن غازی کے اہم ہوائی اڈے پر راکٹوں سے حملہ

بن غازی ۔ 26 اگست ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) لیبیا میں شدت پسند اسلامی عسکریت پسندوں کی جانب سے دارالحکومت طرابلس کے مرکزی ہوائی اڈے پر قبضے کے بعد ملک کے مشرقی شہر بن غازی میں اب تک کام کرنے والے آخری ’الابرق ہوائی اڈے‘ پر بھی راکٹوں سے حملہ کیا گیا ہے۔ برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق الابرق ہوائی اڈے کے ڈائریکٹر نے راکٹ حملوں کی تصدیق کرت

بن غازی ۔ 26 اگست ۔ ( سیاست ڈاٹ کام ) لیبیا میں شدت پسند اسلامی عسکریت پسندوں کی جانب سے دارالحکومت طرابلس کے مرکزی ہوائی اڈے پر قبضے کے بعد ملک کے مشرقی شہر بن غازی میں اب تک کام کرنے والے آخری ’الابرق ہوائی اڈے‘ پر بھی راکٹوں سے حملہ کیا گیا ہے۔ برطانوی خبر رساں ادارے کے مطابق الابرق ہوائی اڈے کے ڈائریکٹر نے راکٹ حملوں کی تصدیق کرتے ہوئے بتایا کہ راکٹ گزشتہ شام نامعلوم سمت سے داغے گئے تھے، جن کے نتیجے میں ایئر پورٹ کی عمارتوں کو نقصان پہنچا ہے۔ ہوائی اڈے کے ڈائریکٹر ابوبکر العبیدی نے بتایا کہ راکٹ حملوں کے باوجود فضائی ٹریفک معمول کے مطابق جاری ہے۔ گذشتہ ہفتے تیونس نے اپنی تمام پروازوں کا رخ طرابلس کے بجائے الابرق اور طبرق ہوائی اڈوں کی طرف موڑ دیا تھا۔ خیال رہے کہ طرابلس میں کشیدگی کے بعد تیونس واحد ملک ہے جس کی پروازوں کا سلسلہ جاری رہا ہے۔ خیال رہے کہ گذشتہ ہفتے مصر اور تیونس سمیت کئی دوسرے ملکوں نے طرابلس کے مرکزی ہوائی اڈے کے بجائے اپنی تمام پروازوں کو مشرقی بن غازی کے الابرق ہوائی اڈے کو استعمال کرنے کی ہدایات دی تھیں۔ اس ہوائی اڈے پر راکٹ حملوں کے بعد غیر ملکی پروازوں کا سلسلہ منقطع ہونے کا خدشہ پیدا ہو گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT