Sunday , November 19 2017
Home / شہر کی خبریں / بوگس انکم سرٹیفکیٹ جاری کرنے والے ایم آر او کے خلاف کارروائی کی ہدایت

بوگس انکم سرٹیفکیٹ جاری کرنے والے ایم آر او کے خلاف کارروائی کی ہدایت

شادی مبارک اسکیم کی بے قاعدگیوں پر سخت نظر، کئی بے قاعدگیوں کا انبار
حیدرآباد۔/2اپریل، ( سیاست نیوز) شادی مبارک اسکیم میں رنگاریڈی کے علاوہ حیدرآباد اور دیگر اضلاع میں بھی کئی ایک بے قاعدگیوں کا پتہ چلا ہے اور اینٹی کرپشن بیورو نے ایم آر او رتبہ کے عہدیداروں کے ساتھ ساتھ اقلیتی بہبود کے ملازمین کے خلاف کارروائی کی تیاری کرلی ہے۔ ڈائرکٹر جنرل اینٹی کرپشن عبدالقیوم خاں نے آج تمام اضلاع کے عہدیداروں کے ساتھ اجلاس میں اس بات کا اشارہ دیا کہ اس اسکیم میں مزید بے قاعدگیاں منظر عام پر آسکتی ہیں اور مزید کئی گرفتاریاں ہوں گی۔ انہوں نے اعلیٰ عہدیداروں کو بھی پابند کیا کہ وہ بے قاعدگیوں پر نظر رکھیں۔ اجلاس میں موجود سکریٹری اقلیتی بہبود سید عمر جلیل نے ڈسٹرکٹ میناریٹی ویلفیر آفیسرس کی شکایت کی اور کہا کہ انہوں نے کافی عرصہ قبل ہی میمو جاری کرتے ہوئے تمام ضلعی عہدیداروں کو اسکیم کی درخواستوں کی جانچ کرنے کی ہدایت دی تھی لیکن عہدیداروں نے کوئی کارروائی نہیں کی۔ تمام ڈسٹرکٹ میناریٹی ویلفیر آفیسرس کو دوبارہ ہدایت دی گئی کہ وہ منظورہ درخواستوں میں سے ہر منڈل سے 10، 10درخواستوں کو حاصل کرتے ہوئے ان کی شخصی طور پر جانچ کریں اور ان کے مستحق ہونے کا پتہ چلائیں۔ اے کے خاں نے رنگاریڈی کے سرورنگر منڈل میں بوگس انکم سرٹیفکیٹ جاری کرنے والے ایم آر او کے خلاف مقدمہ درج کرنے کی ہدایت دی۔ انہوں نے ایک سے زائد مرتبہ نکاح نامہ جاری کرنے والے قاضیوں کے خلاف کارروائی کی ہدایت دی۔ انہوں نے بتایا کہ رنگاریڈی اور دیگر مقامات پر اب تک جن بے قاعدگیوں کا انکشاف ہوا ہے وہ باعث حیرت ہے اور مزید بے قاعدگیاں منظر عام پر آرہی ہیں۔ انہوں نے کہا کہ حیدرآباد کی درخواستوں کی جانچ جاری ہے اور اینٹی کرپشن بیورو کو بے قاعدگیوں کے بعض ابتدائی ثبوت ملے ہیں۔ انہوں نے عوام سے اپیل کی کہ وہ بلا جھجھک درمیانی افراد اور بدعنوان ملازمین کے خلاف شکایت کیلئے آگے آئیں۔ کسی جانب سے شکایت نہ ملنے کے سبب اے سی بی کو کارروائی میں دشواری ہوسکتی ہے۔ اس اجلاس میں رنگاریڈی ضلع کے ڈی ایس پی اینٹی کرپشن پربھاکر موجود تھے۔ انہوں نے ڈی ایم ڈبلیو آفس کے سینئر اسسٹنٹ محمد طاہر حسین کی بے قاعدگیوں کی تفصیل بیان کی۔ اینٹی کرپشن بیورو نے اس عہدیدار کو کل گرفتار کیا تھا۔ انہوں نے بتایا کہ مذکورہ سینئر اسسٹنٹ کے مزید 19 بے قاعدگیوں کا پتہ چلا ہے۔ عہدیدار نے بتایا کہ سرور نگر منڈل میں ایسے افراد کو رقم جاری کردی گئی جنہوں نے درخواست تک داخل نہیں کی اس کے لئے دیگر افراد کے اسنادات استعمال کئے گئے۔ انہوں نے بتایا کہ شادی مبارک اسکیم کے آغاز سے قبل انجام پانے والی شادیوں کو بھی امداد دے دی گئی۔ اس طرح لاکھوں روپئے کا خرد برد کیا گیا ہے۔ اے کے خاں نے کہا کہ تمام 10اضلاع میں اے سی بی کی ٹیمیں جانچ میں مصروف ہیں اور آنے والے دنوں میں مزید گرفتاریاں ہوسکتی ہیں۔ انہوں نے عہدیداروں کو متنبہ کیا کہ وہ کسی بھی بے قاعدگی سے دور رہیں اور ایمانداری سے خدمات انجام دیں۔

TOPPOPULARRECENT