Monday , November 20 2017
Home / شہر کی خبریں / بچوںکی تعلیم کیلئے والدین کے خرچ پر ہندوستان کافی پیچھے

بچوںکی تعلیم کیلئے والدین کے خرچ پر ہندوستان کافی پیچھے

ہانگ کانگ سرفہرست، متحدہ عرب امارات کو دوسرا ، ہندوستان نویں نمبر پر

حیدرآباد۔10ستمبر (سیاست نیوز) دنیا بھر میں بچوں کی تعلیم پر خرچ کرنے والے والدین کے 10سر فہرست ممالک میں ہندستان 9ویں نمبر پر ہے اور ہندستانی والدین کی جانب سے اپنے بچوں کی گریجویٹ تک کی تعلیم کیلئے 18ہزار 909امریکی ڈالر مجموعی اعتبار سے خرچ کئے جاتے ہیں ۔ دنیا میں سب سے زیادہ ہانگ کانگ کے والدین اپنے بچوں کی تعلیم پر خرچ کرتے ہیں اور وہ گریجویٹ تک کی تعلیم کیلئے 1لاکھ 32ہزار 161ڈالر خرچ کرتے ہیں۔ اسی طرح متحدہ عرب امارات کے والدین دوسرے نمبر پر ہیں جو اپنے بچوں کی تعلیم پر گریجویٹ تک لئے 99ہزار 378 ڈالر خرچ کیا کرتے ہیں۔ امریکی والدین کو اپنے بچوں کو گریجویٹ تک لئے 70ہزار 939 ڈالر خرچ کرتے ہیںاسی طرح چینی والدین 42ہزار 892ڈالر خرچ کیا کرتے ہیں اور آسٹریلیاء میں 36ہزار 402ڈالر خرچ کئے جاتے ہیں۔ برطانیہ میں 24ہزار862ڈالر خرچ کرنے پڑتے ہیں جبکہ کینیڈا میں 22ہزار 602ڈالر خرچ کئے جاتے ہیں۔ ہندستانی والدین و سرپرست اپنے بچوں کی گریجویٹ تک کی تعلیم کے لئے 18 ہزار 909ڈالر خرچ کرتے ہیں اور دسویں نمبر پر فرانسیسی ہیں جو اپنے بچوں کی تعلیم کیلئے 16ہزار 708 ڈالر خرچ کیا کرتے ہیں۔ 94فیصد ہندوستانی والدین اپنے بچوں کیلئے پوسٹ گریجویشن تک کی تعلیم کے متعلق منصوبہ بندی کرتے ہیں جو کہ امریکی والدین کے مساوی ہیں جبکہ سنگا پورسے تعلق رکھنے والے 96فیصد والدین و سرپرست ایسے ہیں جو اپنے بچوں کو پوسٹ گریجویشن تک کی تعلیم دلوانے کی کوشش کرتے ہیں اور 94فیصد امریکی والدین ایسے ہیں جو کہ اپنے بچوں کو پوسٹ گریجویشن کروانے میں کامیاب ہوتے ہیں۔ متحدہ عرب امارات میں 90فیصد والدین ایسے ہیں جو کہ اپنے بچوں کی اعلی تعلیم کے متعلق متفکر ہوتے ہیں لیکن برطانیہ میں صرف 88فیصد والدین ایسے ہیں جو اپنے بچوں کی اعلی تعلیم کے متعلق منصوبہ بندی کرتے ہیں۔بیرون ملک اعلی تعلیم کی فراہمی کے سلسلہ میں متحدہ عرب امارات کے والدین سرفہرست ہیں جو اپنے بچوں کو تعلیم کے لئے دوسرے ملکوں کو روانہ کرتے ہیں اور ان کا فیصد 65فیصد ہے اور انڈنیشیائی والدین اپنے بچوں کو بیرون ملک تعلیم کی فراہمی میں دوسرے نمبر پرآتے ہیں جن کا فیصد 60ہے۔ تیسرے نمبر پر ہندستانی طلبہ کے والدین و سرپرست ہیں جو55فیصد کے ساتھ تیسرے نمبر پر ہیں۔ 54فیصد چینی والدین اپنے بچوں کی بیرون ملک تعلیم کا انتظام کرتے ہیں اسی طرح 36فیصد امریکی والدین ہیں جو اپنے بچوں کو معیاری تعلیم کیلئے بیرون ملک روانہ کرتے ہیں اور برطانیہ کے صرف 22 فیصد والدین ایسے ہیں جو اپنے بچوں کو بیرون ملک تعلیم کے حصول کیلئے روانہ کرتے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT