Tuesday , November 21 2017
Home / اضلاع کی خبریں / بچھڑنے کا افسوس ، ساتھیوں سے معذرت خواہی

بچھڑنے کا افسوس ، ساتھیوں سے معذرت خواہی

عادل آباد میں گیٹ ٹو گیدر پروگرام سے ضلع کلکٹرجگن موہن کا خطاب
عادل آباد۔/9اکٹوبر، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز ) متحدہ ضلع عادل آباد میں جس طرح ایک دوسرے کے تعاون سے عوامی فلاح و بہبود و ترقیاتی کاموں کو انجام دیتے ہوئے ضلع کا نام نہ صرف ریاست میں بلکہ ملک کی سطح پر روشن کیا تھا اس طرح ضلع عادل آباد کو چار حصوں میں تقسیم ہونے کے بعد بھی خدمات انجام دینے کی ہدایت ضلع کلکٹر مسٹر ایم جگن موہن نے ضلع کے سرکردہ عہدیداروں کو دی۔ موصوف مستقر عادل آباد کے کلکٹریٹ کانفرنس ہال میں ضلعی عہدیداروں اور میڈیا کے نمائندوں کا ملا جلا اجلاس گیٹ ٹو گیدر سے مخاطب تھے۔ ضلع کو چار حصوں میں منقسم ہونے پر اپنے ساتھ خدمات انجام دینے والے عہدیداروں کے بچھڑنے پر اظہار افسوس کرتے ہوئے مسٹر ایم جگن موہن نے اپنے ساتھیوں سے معذرت خواہی کی اور کہا کہ وہ عوامی مفاد کو ملحوظ رکھتے ہوئے کسی بھی کام کی تاخیر میں متعلقہ عہدیداروں پر برہمی کا اظہار کیا تھا۔ متحدہ ضلع عادل آباد کا آخری اجلاس تصور کرتے ہوئے ضلع کلکٹر نے تمام عہدیداروں کو گلدستہ پیش کرتے ہوئے انہیں اپنی نیک خواہشات کا اظہار کیا۔ قبل از جوائنٹ کلکٹر مسٹر سندرابنار، ڈی آر او مسٹر سنجیو ریڈی، ڈی آر ڈی پی ڈی شریمتی ارونا کماری نے اپنے خیالات کا اظہار کرتے ہوئے ضلع عادل آباد میں خدمت انجام دینے کو باعث اعزاز قرار دیا اور کہا کہ ایک دور میں ضلع میں خدمت انجام دینا کالا پانی کی سزا کے برابر تصور کیا جاتا ہے ابتداء میں مختلف محکمہ جات کے عہدیداروں نے اپنے اپنے تصورات ، تجربات اور خدمات پر تفصیلی بات کہی۔ واضح رہے کہ تہواردسہرہ کے موقع پر 11اکٹوبر کو چیف منسٹر جدید اضلاع کا اعلان کرتے ہوئے قانونی موقف عطا کریں گے اور اسی دن سے جدید قائم کردہ اضلاع اپنی خدمات کا آغاز کریں گے۔ جس کے پیش نظر بیشتر عہدیداروں کا ایک مقام سے دوسرے مقام خدمات انجام دینے کی ذمہ داری عائد کرتے ہوئے تبادلے کئے جارہے ہیں جس کی تفصیلات 10اکٹوبر کو حاصل ہوگی۔

TOPPOPULARRECENT