Thursday , August 16 2018
Home / Top Stories / بچے پیدا کرنے والی فیکٹری پر پولیس دھاوا

بچے پیدا کرنے والی فیکٹری پر پولیس دھاوا

لاگوس ۔ 22 ۔ مارچ : ( سیاست ڈاٹ کام ) : نائجیریا میں پولیس نے کہا ہے کہ انہوں نے لاگوس کے قریب ’ بچے پیدا کرنے والی فیکٹری ‘ سمجھے جانے والے ایک گھر پر دھاوا کرتے ہوئے وہاں سے آٹھ حاملہ لڑکیوں کو برآمد کرلیا جو انہیں پیدا ہونے والے بچوں کو 2000 امریکی ڈالر میں فروخت کرنے کا منصوبہ رکھتی تھیں ۔

لاگوس ۔ 22 ۔ مارچ : ( سیاست ڈاٹ کام ) : نائجیریا میں پولیس نے کہا ہے کہ انہوں نے لاگوس کے قریب ’ بچے پیدا کرنے والی فیکٹری ‘ سمجھے جانے والے ایک گھر پر دھاوا کرتے ہوئے وہاں سے آٹھ حاملہ لڑکیوں کو برآمد کرلیا جو انہیں پیدا ہونے والے بچوں کو 2000 امریکی ڈالر میں فروخت کرنے کا منصوبہ رکھتی تھیں ۔

پولیس ترجمان ابمبولہ اوئے ایما نے کہا کہ ’ انٹلی جنس اطلاعات موصول ہونے کے بعد ہم نے بچے پیدا کرنے والی فیکٹری پر جمعہ کو دھاوا کیا جو ریاست اوگن کے ضلع اکوٹے میں واقع ہے ‘ ۔ اس گھر میں 20 سال سے کم عمر کی آٹھ حاملہ لڑکیوں کے علاوہ گھر چلانے والا مشتبہ شخص بھی دیکھا گیا ۔ لڑکیوں نے اعتراف کیا کہ وہ ایک بچہ 1800 امریکی ڈالر یا 300,000 نائرا میں فروخت کیا کرتی ہیں ۔ نائجیریا میں 2011 سے اب تک بچے پیدا کرنے والی ایسی فیکٹریوں سے 125 لڑکیوں کو آزاد کروایا گیا ہے ۔ بالعموم لاولد مرد ، بانجھ عورتیں ایسے بچے خریدا کرتے ہیں ۔ بردہ فروشی کے لیے بھی ان بچوں کو استعمال کیا جاتا ہے ۔۔

TOPPOPULARRECENT