Friday , December 15 2017
Home / شہر کی خبریں / بڑے جانوروں کی منتقلی کیلئے ویٹرنری ڈاکٹر کا سرٹیفکیٹ لازمی

بڑے جانوروں کی منتقلی کیلئے ویٹرنری ڈاکٹر کا سرٹیفکیٹ لازمی

عیدالاضحی اور گنیش تہوار کے مواقع پر ناخوشگوار واقعات کو روکنے پولیس چوکس

حیدرآباد۔ 16 ستمبر (سیاست نیوز) عیدالاضحی کے موقع پر شہر کو بڑے جانوروں کی منتقلی کے لئے ویٹرنری ڈاکٹر کا سرٹیفکٹ لازمی ہے۔ کمشنر پولیس حیدرآباد مسٹر ایم مہندر ریڈی نے آج بتایا کہ حیدرآباد اور سائبرآباد کے سرحدی علاقوں پر چیک پوسٹس قائم کئے گئے ہیں جس کے ذریعہ بڑے جانوروں کی منتقلی کے دوران کوئی ناخوشگوار واقعہ پیش نہ آنے کی روک تھام اور عوام کے بعض گوشوں کی جانب سے ان جانوروں کی منتقلی کو روکنے کے سلسلہ میں کڑی نظر رکھی جائے گی۔  انھوں نے عوام سے اپیل کی ہے کہ جانوروں کی منتقلی کے دوران قانون کو ہاتھ میں نہ لیں کیوں کہ متعلقہ پولیس ہر چیک پوسٹ موجود ہے۔ انھوں نے بتایا کہ جاریہ ماہ منعقد ہونے والے عیدالاضحی اور گنیش تہوار کے موقع پر سکیوریٹی کے وسیع ترین انتظامات کئے جارہے ہیں جس کے تحت 20 ہزار پولیس ملازمین بشمول نیم فوجی دستوں کو شہر کے مختلف علاقوں میں متعین کئے جارہا ہے۔ گنیش تہوار اور جلوس کے دوران اشتعال انگیز تقاریر کرنے پر سخت کارروائی کی جائے گی اور ان تقاریر کی ویڈیو ریکارڈنگ کے ذریعہ متعلقہ پولیس اسٹیشن کو اس سلسلہ میں مقدمہ درج کرنے کی ہدایت دی جارہی ہے۔ مسٹر مہندر ریڈی نے بتایا کہ دونوں شہروں میں 310 انتہائی حساس اور 650 حساس علاقوں کی نشاندہی کی گئی ہے جہاں پر مسلح پولیس پکٹس کو متعین کیا جارہا ہے۔ 23 ستمبر سے تلنگانہ قانون ساز اسمبلی کے اجلاس کے آغاز پر سکیوریٹی کے وسیع ترین انتظامات کئے جارہے ہیں۔ انھوں نے بتایا کہ27 ستمبر کو بالاپور تا حسین ساگر جھیل منظم کئے جانے والے مرکزی گنیش وسرجن جلوس کی سی سی ٹی وی کیمروں کے ذریعہ مکمل ریکارڈنگ کی جائے گی اور شہر کے کمانڈ اور کنٹرول سے جلوس پر راست نگرانی رکھی جائے گی۔ کمشنر پولیس نے مزید بتایا کہ پولیس بندوبست کے لئے پڑوسی ریاست آندھراپردیش اور چھتیس گڑھ سے زائد پولیس عملہ کو طلب کیا جارہا ہے اور ریاست تلنگانہ کے تمام اضلاع کی پولیس کو بھی 10 دن کے گنیش تہوار میں متعین کیا جارہا ہے۔ انھوں نے مزید بتایا کہ یہ پہلی مرتبہ ہے کہ عیدالاضحی اور گنیش تہوار کا بیک وقت 25 ستمبر کو عیدالاضحی اور 27 ستمبر کو گنیش وسرجن کا انعقاد ہورہا ہے جس کے پیش نظر حیدرآباد سٹی پولیس نے سخت چوکسی اختیار کئے ہوئے ہے۔ گنیش تہوار کے لئے 120 پٹرولنگ گاڑیاں، 15 انٹرسپٹر گاڑیاں اور 50 اسٹیٹک کرینس حسین ساگر جھیل کے اطراف نصب کئے جارہے ہیں۔ عیدالاضحی کے موقع پر عیدگاہوں کے قریب بھی سکیوریٹی کے وسیع ترین انتظامات کئے جارہے ہیں اور ٹریفک کے بہاؤ میں کسی بھی قسم کا خلل نہ ہونے پر اپنی توجہ مرکوز کئے ہوئے ہے۔ 24 گھنٹے بم ڈسپوزل ٹیم کی خدمات حاصل کی جائیں گی اور ہر گنیش منڈپ کی سکیوریٹی کو یقینی بنانے کیلئے کوشش کی جارہی ہے۔ انھوں نے بتایا کہ متعلقہ پولیس اسٹیشن کے عملہ کو جاریہ ماہ منعقد ہونے والے دونوں تہواروں کے موقع پر احتیاط برتنے اور وسرجن کے لئے رہنمایانہ خطوط جاری کئے گئے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT