Wednesday , December 13 2017
Home / کھیل کی خبریں / بگ تھری کرکٹ کے لئے نقصاندہ‘لندن میں احتجاج

بگ تھری کرکٹ کے لئے نقصاندہ‘لندن میں احتجاج

لندن۔22 اگسٹ (سیاست ڈاٹ کام ) انگلینڈ اور آسٹریلیا کے درمیان پانچویں ایشز ٹسٹ میچ کے دوران اوول کے باہر درجنوں مظاہرین نے کرکٹ کی دنیا پر انگلینڈ، آسٹریلیا اور ہندوستان کی اجارہ داری کے خلاف احتجاج کیا۔یہ احتجاج ’ڈیتھ آف اے جنٹل مین‘ کے نام بنائی گئی دستاویزی فلم کے مشترکہ ڈائریکٹرز سویم کولنز اور جیرڈ کمبر کی جانب سے شروع کیا گیا۔اس دستاویزی فلم میں انٹرنیشنل کرکٹ کونسل (آئی سی سی) کی جگہ گزشتہ سال کرکٹ کی باگ ڈور اور گورننگ بورڈ پر ہندوستان، انگلینڈ اور آسٹریلیا کے سنبھالنے کو شدید تنقید کا نشانہ بنایا گیا۔اس مظاہرے میں کنزرویٹو پارٹی کے قانون دان ڈیمین کولنز بھی شریک تھے جہاں تین منٹ کی خاموشی منائی کی گئی جس میں سے ہر ایک منٹ ہندوستان، انگلینڈ اور آسٹریلیا کے لئے تھا۔ڈیتھ آف اے جنٹل مین میں الزام عائد کیا گیا کہ انٹرنیشنل کرکٹ میں شفافیت کی کمی ہے جہاں بی سی سی آئی کے صدر سری نواسن، انگلش بورڈ کے صدر جائلز کلارک اور کرکٹ آسٹریلیا کے چیئرمین والی ایڈورڈز  اپنے ملکوں کے مفاد میں دنیائے کرکٹ کے معاملات چلا رہے ہیں اور دیگر ملکوں کو اپنی بقا کی جنگ لڑنے کیلئے شدید مشکلات کا سامنا ہے۔ دستاویزی فلم میں کہا گیا ہے کہ 52 فیصد ریونیو پر ان تینوں ملکوں کا قبضہ ہے، باقی 102 ملکوں کی صرف 48 فیصد ریونیو تک رسائی ہے جبکہ کھیل کی مختصر طرز کیلئے ٹسٹ کرکٹ کو قربان کیا جا رہا ہے۔علاوہ ازیں یہ بھی کہا گیا کہ ایک ایسے موقع پر جب دنیا کے تمام کھیلوں کو وسعت دی جا رہی ہے آئی سی سی دراصل کرکٹ ورلڈ کپ کو مزید محدود کر رہا ہے اور اولمپک میں شرکت نہیں کروانا چاہتا ہے۔انگلینڈ کے ہاؤس آف کامن میں ثقافت، میڈیا اور کھیلوں کی کمیٹی کے رکن ڈیمین کولنز نے کہا کہ کرکٹ کا موجودہ ڈھانچہ مجموعی طور پر کھیل کو نقصان پہنچا رہا ہے۔یہ کھیل کے لئے بہت نقصان دہ ہے، میں کھیل کی کمیٹی سے سفارش کروں گا کہ وہ جائلز کلارک کو طلب کر کے ان سے دریافت کریں گے ان کا کردار کیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT