Tuesday , November 21 2017
Home / سیاسیات / بھارت ماتا کی جئے ، بی جے پی کی ضد پر کانگریس کی تنقید

بھارت ماتا کی جئے ، بی جے پی کی ضد پر کانگریس کی تنقید

’نیتا جی نے جئے ہند اور بھگت سنگھ نے انقلاب زندہ باد کہا تھا ‘
نئی دہلی ۔ /20 مارچ (سیاست ڈاٹ) کام ) کانگریس نے کس کی حب الوطنی کے ثبوت کے طور پر ’’بھارت ماتا کی جئے ‘ کا نعرہ لگانے کیلئے بی جے پی کے اصرار پر آج سخت تنقید کی اور اس بات پر حیرت کا اظہار کیا کہ وہ ( بی جے پی) نیتاجی سبھاش چندر بوس اور شہید بھگت سنگھ جیسے محبان وطن کو کیا نام دے گی ۔ جنہوں نے ’ بھارت ماتا کی جئے‘ نہیں کہا تھا ۔ کانگریس کے ایک سینئر لیڈر نتیش تیواری نے ٹوئٹر پر لکھا کہ ’’نیتاجی نے ’جئے ہند‘ اور بھگت سنگھ نے ’انقلاب زندہ باد‘ اور ’ ہندوستان زندہ باد‘ کا نعرہ لگایا تھا جبکہ بی جے پی کہتی ہے کہ ’بھارت ماتا کی جئے ‘ کے سواء دوسرا کچھ بھی کہنا ملک و قوم دشمن ہے ‘‘ ۔ قبل ازیں کانگریس کے دیگر چند قائدین نے بھی کہا کہ ’’ عوام میں ’ بھارت ماتا کی جئے ‘ کہنا ایک اختیاری معاملہ ہے ۔ اس مسئلہ پر ملک میں بحث جاری ہے ۔ ایم آئی ایم لیڈر اسد الدین اویسی نے ’ بھارت ماتا کی جئے ‘ کہنے سے انکار کرتے ہوئے ایک تنازعہ پیدا کردیا تھا اور کہا تھا کہ یہ کہنا شخصی واختیاری معاملہ ہے اور یہ کہنے کیلئے کسی کو زبردستی مجبور نہیں کیا جاسکتا ۔ بی جے پی کے صدر امیت شاہ نے گزشتہ روز اپنی پارٹی کے قومی عاملہ کے اجلاس سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ ملک کے خلاف تنقید برداشت نہیں کی جائے گی ۔ حق آزادی اظہار خیال ، محض ملک دشمن نعرے لگانے کیلئے کوئی بہانہ نہیں بناسکتا ۔منیش تیواری نے بی جے پی پر الزام عائد کیا کہ وہ وقفہ وقفہ سے فرقہ پرستی پر مبنی واقعات کو موضوع بناتے ہوئے عوامی مسائل سے توجہ ہٹانے کی کوشش کررہی ہے ۔ انہوں نے اس خیال کا اظہار کیا کہ بھارت ماتا کی جئے جیسے نعروں پر بحث کی گنجائش نہی ہے ۔ اور کسی کو کوئی مخصوص نعرہ لگانے کیلئے مجبور نہیں کیا جانا چاہئیے ۔ تیواری نے مزید کہا کہ ان سرگرمیوں میں الجھنے کے بجائے حکمرانی پر توجہ مرکوز کرنا زیادہ بہتر ہوگا ۔ بصورت دیگر ملک میں سماجی اتحاد و ہم آہنگی کو خطرہ لاحق ہوجائے گا ۔

TOPPOPULARRECENT