Wednesday , November 22 2017
Home / شہر کی خبریں / بھولکپور مشیر آباد کے غریب طلباء وطالبات ذہانت کی دولت سے مالا مال

بھولکپور مشیر آباد کے غریب طلباء وطالبات ذہانت کی دولت سے مالا مال

زکواۃ کی رقم کو ملت کی معاشی و تعلیمی ترقی پر صرف کرنے جناب زاہد علی خاں کا مشورہ
انجمن محبان اہلبیت کو فیض عام ٹرسٹ کی مالی مدد

حیدرآباد ۔ 6 ۔ جنوری : ( نمائندہ خصوصی) : نونہالان ملت میں ذہانت اور صلاحیتوں کی کوئی کمی نہیں ہے ۔ بس انہیں صحیح رہنمائی کی ضرورت ہے ۔ علم و ہنر تعلیم و تربیت کے شعبوں میں ان نونہالان ملت کی صحیح رہنمائی کی جاتی ہے تو ہمیں یقین ہے کہ ملت میں پیشہ وارانہ ماہرین اور ہنر مندوں کی کوئی کمی نہیں ہوگی اور مسلمان تعلیمی و معاشی لحاظ سے مستحکم ہوجائیں گے ۔ ان خیالات کا اظہار ایڈیٹر سیاست جناب زاہد علی خاں نے انجمن محبان اہلبیت بھولکپور مشیر آباد کے تربیتی مرکز میں طلباء وطالبات و خواتین سے خطاب کرتے ہوئے کیا ۔ انجمن محبان ملت کے ذریعہ مقامی نوجوان غریب لڑکیوں اور خواتین کو ٹیلرنگ ، نرسنگ ، ابتدائی طبی امداد ، ڈینٹل کیر ( دانتوں کی حفاظت ، صفائی ، روٹ کنال ، کیاویٹی پر کرنے کی تربیت ) فراہم کررہے ہیں ۔ اس کے علاوہ انجمن محبان اہلبیت کے زیر اہتمام 30 سال سے زائد عمر کی خواتین کو قرآن مجید پڑھانے کا بھی انتظام کیا گیا ہے ۔ اس انجمن کو روزنامہ سیاست اور فیض عام ٹرسٹ کی بھر پور سرپرستی حاصل ہے ۔ انجمن محبان اہلبیتؓ کے ذریعہ نہ صرف غریب مریضوں اور ضرورت مندوں کی مدد کی جاتی ہے بلکہ غریب خاندانوں میں کسی کے انتقال کی صورت میں ڈیرے و دیگر سامان کی فراہمی کا مفت بندوبست کیا جاتا ہے ۔ اپنا سلسلہ خطاب جاری رکھتے ہوئے کہا کہ آج مسلمان ہر طرح سے پریشان ہیں غربت مسلمانوں میں زیادہ پائی جاتی ہے ۔ تعلیمی پسماندگی کا سب سے زیادہ شکار مسلمان ہی ہیں ۔ ماں باپ کی غربت کے باعث کمسن بچے ، کارخانوں ، ہوٹلوں اور دکانات میں کام کرنے پر مجبور ہیں ۔ انجمن محبان اہلبیت غریبوں کے لیے جو کام کررہی ہے ملت کے نونہالوں میں تعلیمی شعور بیدار کرنے کا جس طرح فریضہ انجام دے رہی ہے ۔ غریب مریضوں اور ان کے رشتہ داروں کی جس طرح مدد کررہی ہے وہ قابل ستائش ہے ۔

سب سے بڑی بات یہ ہے کہ بھولکپور میں خواتین اور طالبات کے علاوہ نوجوان کچھ سیکھنے ، کچھ کر دکھانے کا عزم رکھتے ہیں ۔ جناب زاہد علی خاں نے مزید کہا کہ ہمارے شہر میں کروڑہا روپئے کی زکواۃ نکالی جاتی ہے ۔ اگر زکواۃ کی اس رقم کو کسی ایک مرکزی ادارہ میں جمع کر کے اس سے فلاحی کام شروع کئے جائیں تو مسلمانوں میں ایک غیر معمولی تعلیمی اور معاشی انقلاب برپا ہوسکتا ہے ۔ ان کے معیار زندگی کے ساتھ ساتھ معیار تعلیم میں بھی اضافہ ہوگا اور ملت میں ہنر مند پیدا ہوں گے ۔ ایڈیٹر سیاست کے مطابق پرانا شہر میں جو غربت اور پسماندگی ہے وہی پسماندگی بھولکپور میں بھی ہے اسے تعلیم اور معاشی ترقی کے ذریعہ ہی دور کیا جاسکتا ہے ۔ تقریب کا آغاز حافظ محمد اسمعیل کی قرات کلام پاک سے ہوا ۔ ان کے خوبصورت لحن سے ماحول میں ایک عجیب سی کیفیت طاری ہوگئی تھی جب کہ کمسن طالبہ صبا بیگم نے بہت ہی خوبصورت انداز میں بارگاہ رسالت مآبﷺ میں نعت شریف پیش کی ۔ جناب زاہد علی خاں نے طالبات و خواتین پر زور دیا کہ وہ مہندی ڈیزائننگ جیسے کورسیس کریں جس سے آمدنی کے ذرائع پیدا ہوں گے ۔ اس سے خاندانوں کی مدد ہوگی ۔

اس موقع پر ٹینٹ ہاوز کے لیے فیض عام ٹرسٹ کی جانب سے جناب زاہد علی خاں کے ہاتھوں انجمن محبان اہلبیتؓ کے عہدیداروں محمد شفیع الدین ، محمد سعید احمد ، خواجہ معین الدین عرف بابا ، محمد ابراہیم ممبئی ، محمد واجد کراٹے ، صوفی مجیب ، محمد نعیم سوداگر ، محمد ذاکر ، محمد ادریس ، محمد ابوبکر ، محمد سہیل ، سرفراز ، محمد حسن الدین وغیرہ کو 60 ہزار روپئے حوالے کئے گئے ۔ ایک ہفتہ قبل ہی سکریٹری ٹرسٹ جناب افتخار حسین اور ان کے داماد جناب رضوان حیدر نے انجمن کو اپنی جانب سے ایک لاکھ روپئے کی امداد جناب زاہد علی خاں کے ہاتھوں ہی پیش کی تھی ۔ جناب افتخار حسین نے کہا کہ بھولکپور کے غریب اور ضرورت مندوں کی مدد کے لیے فیض عام ٹرسٹ اور سیاست دونوں ادارے ہمیشہ تیار ہیں خاص طور پر تعلیمی مسائل کے حل میں وہ مستحق طلبہ کی مدد کے لیے تیار ہیں ۔ ہلپینگ ہینڈ کے صدر ڈاکٹر شوکت علی مرزا اور فیض عام ٹرسٹ کے ٹرسٹی ڈاکٹر مخدوم محی الدین بھی موجود تھے ۔ جناب زاہد علی خاں کے ہاتھوں فرسٹ ایڈ ٹریننگ میں کامیاب طلباء وطالبات میں سرٹیفیکٹس کی تقسیم بھی عمل میں آئی ۔۔

TOPPOPULARRECENT