Wednesday , November 22 2017
Home / Top Stories / بہار میں بی جے پی 160 اسمبلی نشستوں پر مقابلہ کریگی

بہار میں بی جے پی 160 اسمبلی نشستوں پر مقابلہ کریگی

ایل جے پی کو 40 اور مانجھی کو 20نشستیں ‘ این ڈی اے حلیفوں میں تعداد کو قطعیت
نئی دہلی ۔14ستمبر ( سیاست ڈاٹ کام ) این ڈی اے نے آج بہار انتخابات کیلئے نشستوں کی تقسیم کو قطعیت دے دی ۔ جب کہ بی جے پی کو 243اسمبلی حلقوں میں سے 160حلقے ‘ حلیف پارٹیوں ایل جے پی کو 40 اور جتن رام مانجھی کو 20نشستیں مختص کی گئی ہیں ۔ اس فیصلہ کا کئی دن سے سرگرم مباحث کے بعد اعلان کرتیہ وئے قومی صدر بی جے پی امیت شاہ نے جن کے ہمراہ ایل جے پی کے صدر رام ولاس پاسوان اور مانجھی بھی تھے کہا کہ اوپیندر پشواہا کی آر ایل ایس پی 23نشستوں پر مقابلہ کرے گی ۔ انہوں نے کہا کہ این ڈی اے میں شریک چاروں جماعتوں کے درمیان کوئی رسہ کشی نہیں ہے ۔ نشستوں کی تقسیم کا معاہدہ ہوچکا ہے ۔ امیت شاہ نے اس موقع پر تمام چار سیاسی پارٹیوں کے کارکنوں سے اپیل کی کہ انتخابات میں متحدہ طور پر کام کریں اور حلیف پارٹیوں کو نتیش کمار زیرقیادت جے ڈی یو ۔ آر جے ڈی ۔ کانگریس اتحاد کے مقابلہ میں کامیابی سے ہمکنار کریں ۔ سابق چیف منسٹر بہار مانجھی قائد ہندوستانی عوام مورچہ ( سیکولر) واضح طور پر ناراض نظر آرہے تھے جبکہ انہیں 15 نشستوں کا پیشکش کیا جارہا تھا ۔ بی جے پی کے صدر نے آج کہا کہ چیف منسٹری کے مسئلہ کا فیصلہ این ڈی اے ارکان اسمبلی انتخابات کے بعد کریں گے ۔ حلیف پارٹیوں کے درمیان کوئی اختلافات نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ایک طرف مخلوط اتحاد کی مجبوریاں ہیں تو دوسری طرف اتحاد میں مشترک ہم آہنگی اور یکساں نظریات پائے جاتے ہیں ۔ امیت شاہ نے بہار کے عوام سے اپیل کی کہ وہ این ڈی اے کو ایک موقع دیں ۔ انہوں نے یاد دہانی کی کہ بہار مخالف کانگریس گہوارہ رہ چکا ہے ۔ انہوں نے زور دے کرکہا کہ رائے دہندوں کو وزیراعظم نریندر مودی کی اپیل پر آگے آنا چاہیئے اور ’’کانگریس مکت بھارت ‘‘ بنانا چاہیئے ۔ شاہ نے جے ڈی یو ۔ آر جے ڈی ۔ کانگریس عظیم اتحاد پر سخت تنقید کرتے ہوئے کہا کہ ایسا معلوم ہوتا ہے کہ پہلے ہی اس میں پھوٹ پڑچکی ہے ۔ جنتا پریوار کے ملائم سنگھ یادو نے اتحاد سے ترک تعلق کرلیا ہے ۔ انہوں نے اعتماد ظاہر کیا کہ اس اہم ریاست میں این ڈی اے برسراقتدار آئے گی۔

TOPPOPULARRECENT