Wednesday , December 12 2018

بہرائچ میں مورتی بٹھانے پر دو گروپس میں جھڑپ ۔ 6 پولیس اہلکار زخمی

بہرائچ 11 اکٹوبر ( سیاست ڈاٹ کام ) یو پی کے بہرائچ ضلع میں دو فرقوں کے مابین درگا مورتی بٹھانے کے مسئلہ پر جھڑپ ہوگئی جس میں مداخلت کرنے والے 6 پولیس اہلکار زخمی ہوگئے ۔ پولیس نے یہ بات بتائی ۔ اڈیشنل سپرنٹنڈنٹ پولیس ( رورل ) رویندر کمار سنگھ نے کہا کہ یہ واقعہ کل سسیائے سالون علاقہ میں اس وقت پیش آیا جب کچھ افراد نے درگا کی مورتی بٹھانے کی کوشش کی تھی ۔ یہ کوشش مقامی پولیس کی اجازت کے بغیر بٹھائی جا رہی تھی ۔ دوسری برادری سے تعلق رکھنے والے افراد نے اس پر اعتراض کیا جس کے نتیجہ میں جھڑپ ہوگئی ۔ انہوں نے کہا کہ ہندووں اور مسلمانوں کے گروپس کے مابین وہاں پتھراو کا تبادلہ ہوا ۔ متحارب گروپس نے وہاں پہونچنے والی پولیس ٹیم پر بھی حملہ کردیا ۔ اس واقعہ میں چھ پولیس اہلکار زخمی ہوگئے ہیں جن میں دو سب انسپکٹران ا ور چار کانسٹیبلس شامل ہیں۔ انہوں نے کہا کہ انہیں یہ پتہ نہیں ہے کہ آیا متحارب گروپس کے ارکان میں بھی کوئی زخمی ہوئے یا نہیں۔ انہوں نے بتایا کہ پولیس نے دونوں برادریوں کے 290 افراد کے خلاف مقدمات درج کئے ہیں۔ ان میں 40 ملزمین کی شناخت ہوچکی ہے اور 15 کو گرفتار بھی کرلیا گیا ہے ۔ انہوں نے بتایا کہ علاقہ میں اضافی پولیس فورس روانہ کردی گئی ہے اور صورتحال اب قابو میں بتائی گئی ہے ۔ ضلع مجسٹریٹ مالا سریواستو اور سپرنٹنڈنٹ پولیس سبھاراج سنگھ نے بھی علاقہ کا دورہ کیا ۔

TOPPOPULARRECENT