Saturday , December 16 2017
Home / ہندوستان / بیرونی دوروں پر پارلیمنٹیرینس کو تازہ اڈوائزری

بیرونی دوروں پر پارلیمنٹیرینس کو تازہ اڈوائزری

نئی دہلی ۔ 7 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) بیرونی تنظیموں اور شخصیتوں کے زیراہتمام بیرون ملک دورہ کرتے ہوئے ارکان پارلیمنٹ کو یہ یقینی بنانا چاہئے کہ ان کے کوئی بھی سرگرمی سے ایسا غیردانستہ تاثر نہ ملنے پائے کہ وہ پارلیمنٹ کی طرف سے سرکاری دورہ پر ہیں۔ نیز میزبانی قبول کرنے سے قبل ارکان کو اپنے طور پر اس ایونٹ کا اہتمام کرنے والی تنظیم یا ادارہ کے تعلق سے اچھی طرح اطمینان کرلینا چاہئے۔ یہ باتیں راجیہ سبھا سکریٹریٹ کی جانب سے پارلیمنٹرینس کو جاری کردہ تازہ صلاح کا حصہ ہیں۔ اس میں کہا گیا کہ کسی بھی قسم کی تاخیر کو ٹالنے کیلئے ارکان کو چاہئے کہ بیرونی سفر کے ضمن میں اپنی درخواستیں وزارت امورداخلہ کو سفر کی مجوزہ تاریخ سے کم از کم دو ہفتے قبل بھیجیں۔ راجیہ سبھا سکریٹریٹ جنرل سومشیر شیرف کی جاری کردہ اڈوائزری میں مزید کہا گیا کہ ارکان کو بیرون ملک کا سفر کرنے سے قبل یہ یقینی بنا لینا چاہئے کہ وزارت امورداخلہ کی درکار اجازت حاصل ہوچکی ہے کیونکہ محض درخواست بھیج دینا قانونی اجازت مل جانا نہیں ہوتا۔ ایم ایز کو بیرون ملک روانگی سے قبل وزارت امورخارجہ سے سیاسی منظوری کے حصول کو بھی یقینی بنانا چاہئے۔

TOPPOPULARRECENT