Friday , June 22 2018
Home / ہندوستان / بیرون ملک اکاونٹ غیر قانونی نہیں ، ضوابط کی تکمیل : ڈابرانڈیا

بیرون ملک اکاونٹ غیر قانونی نہیں ، ضوابط کی تکمیل : ڈابرانڈیا

نئی دہلی ۔ 27 ۔ اکٹوبر : ( سیاست ڈاٹ کام ) : کالے دھن معاملہ میں ڈابر انڈیا خاندان کے ایک رکن پردیپ برمن کا نام ان لوگوں میں لیا جارہا ہے جو بیرون ملک کی بینک میں اکاونٹ ہولڈر ہیں جس پر ڈابر انڈیا پروموٹر فیملی برمنس نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ اکاونٹ تمام قانونی تقاضوں کی تکمیل کرتے ہوئے کھولا گیا ہے ۔ ڈابر کے ایک ترجمان نے بیان جاری کرتے

نئی دہلی ۔ 27 ۔ اکٹوبر : ( سیاست ڈاٹ کام ) : کالے دھن معاملہ میں ڈابر انڈیا خاندان کے ایک رکن پردیپ برمن کا نام ان لوگوں میں لیا جارہا ہے جو بیرون ملک کی بینک میں اکاونٹ ہولڈر ہیں جس پر ڈابر انڈیا پروموٹر فیملی برمنس نے وضاحت کرتے ہوئے کہا کہ اکاونٹ تمام قانونی تقاضوں کی تکمیل کرتے ہوئے کھولا گیا ہے ۔ ڈابر کے ایک ترجمان نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا وہ یہ وضاحت کرنا چاہتے ہیں کہ جس وقت اکاونٹ کھولا گیا مسٹر برمن ایک این آر آئی تھے اور انہیں قانونی طور پر اکاونٹ کھولنے کی اجازت دی گئی تھی ۔ مزید وضاحت کرتے ہوئے یہ بھی بتایا گیا کہ اکاونٹ کے تعلق سے تمام قوانین و ضوابط پر رضاکارانہ طور پر عمل آوری کی گئی تھی اور ساتھ ہی ساتھ قانونی طور پر انکم ٹیکس ریٹرنس کا محکمہ انکم ٹیکس میں ادخال بھی کیا گیا اور کوئی ٹیکس بھی بقایا جات میں شامل نہیں ہے ۔ یہاں اس بات کا تذکرہ بھی ضروری ہے کہ پردیپ برمن ایف ایم سی جی میں کوئی عہدہ نہیں رکھتے جب کہ ایک زمانہ تھا جب وہ ڈابر انڈیا کے ہمہ وقتی ڈائرکٹر تھے ۔ دریں اثناء راج کوٹ کے ایک صرافہ تاجر پنکج چمن لال لودھیا جن پر بیرون ملک میں اکاونٹ ہونے کا الزام عائد کیا گیا ہے نے تردید کرتے ہوئے کہا کہ سوئس بینک میں ان کا کوئی اکاونٹ نہیں ہے ۔ انہوں نے کہا کہ انکم ٹیکس ریٹرنس میں سب تفصیلات پیش کی جاچکی ہیں اور فی الحال وہ اس سے زیادہ کچھ بھی کہنا نہیں چاہتے ۔ انہیں حیرت اس بات پر ہے کہ ان کا نام کس طرح فہرست میں شامل کیا گیا ۔ وہ گذشتہ 15 سال سے اس کاروبار میں ہیں جو پورے ہندوستان میں پھیلا ہواہے ۔

TOPPOPULARRECENT