Saturday , December 15 2018

بیماریوں کی شناخت ڈاکٹرس کی اولین ذمہ داری

محبوب نگر ۔13ستمبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) میری عین خواہش تھی کہ ڈاکٹر بنتے ہوئے انسانوں کی خدمت کروں لیکن حالات نے مجھے کلکٹر بنادیا ۔ ان خیالات کا اظہار ضلع کلکٹر محترمہ جی ڈی پریا درشنی نے ایس وی ایس آڈیٹوریم میں جمعہ کے دن منعقدہ آل انڈیا پیتھالوجی ‘ مائیکروبیالوجی اسوسی ایشن کے ریاستی سطح کے 32ویں سمینار سے مخاطب کرتے ہوئے کیا ۔ اس

محبوب نگر ۔13ستمبر ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) میری عین خواہش تھی کہ ڈاکٹر بنتے ہوئے انسانوں کی خدمت کروں لیکن حالات نے مجھے کلکٹر بنادیا ۔ ان خیالات کا اظہار ضلع کلکٹر محترمہ جی ڈی پریا درشنی نے ایس وی ایس آڈیٹوریم میں جمعہ کے دن منعقدہ آل انڈیا پیتھالوجی ‘ مائیکروبیالوجی اسوسی ایشن کے ریاستی سطح کے 32ویں سمینار سے مخاطب کرتے ہوئے کیا ۔ اس موقع پر انہوں نے کہا کہ میڈیکل کے میدان میں پیتھالوجی کا شعبہ ڈاکٹروں کیلئے نہایت ہی اہم ہوتا ہے ۔ بیماری کی شناخت ڈاکٹرز کی اولین ذمہ داری ہے ۔ انہوں نے خواہش کی کہ اس سمینار میں بیرون ممالک سے شرکت کرنے والے ڈاکٹرز نے طب کے تمام شعبوں پر تفصیلی روشنی ڈالیں۔ پریا درشنی سمینار سے بحیثیت مہمان خصوصی مخاطب تھیں ۔ ضلع پریشد چیرمین باڈاری بھاسکر نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ مریضوں کیلئے ڈاکٹر مسیحا ہوتا ہے ۔ لہذا ڈاکٹرز اس معیار پر پورا اتریں اور اطمینان بخش طریقے سے مریضوں کا علاج کریں اور مریضوں کی زندگی بچانے کی کوشش کریں لیکن ان کی نعشوں پر تجارت نہ کریں ۔ مقامی ایم ایل اے وی سرینواس گوڑ نے مخطب کرتے ہوئے کہا کہ تلنگانہ کی علحدگی کے بد اتنے بڑے پیمانے پر سمینار کا انعقاد ہمارے لئے باعث فخر ہے ۔ انہوں نے افسوس ظاہر کرتے ہوئے کہا کہ بعض ڈاکٹرس طب کو تجارت بنائے ہوئے ہیں اور پیسہ لوٹ رہے ہیں ۔ اس صدی کے ڈاکٹروں کو انہوں نے مشورہ دیا کہ وہ انسانی بنیادوں پر مریضوں کا علاج کریں۔ سمینار میں آل انڈیا پیتھالوجی مائیکرو بیالوجی کے ریاستی صدر وینوکا‘ معتمد انونائی کے علاوہ ایس وی ایس کالج کے چیرمین کنکاراجو‘ میڈیکل ڈائرکٹرز کے جے ریڈی ‘ ریسیڈنٹ ڈاکٹر رام ریڈی کے علاوہ ڈاکٹرز اور میڈیکل طلبہ کی کثیر تعداد شریک تھی۔

TOPPOPULARRECENT