Monday , December 11 2017
Home / شہر کی خبریں / بینائی سے محرومی ، سروجنی آئی ہاسپٹل بری الذمہ

بینائی سے محرومی ، سروجنی آئی ہاسپٹل بری الذمہ

ناگپور کی حسیب فارمیسی کے فراہم کردہ سلوشن میں نقص ، سہ رکنی کمیٹی کی رپورٹ
حیدرآباد ۔ 20 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز) : اس ماہ کے شروع میں سروجنی دیوی آئی ہاسپٹل میں کی گئی آئی سرجریز کے بعد ہوئے انفیکشن کے کیسیس کی ریاستی حکومت کی طرف سے کرائی گئی تحقیقات میں کہا گیا ہے کہ ناگپور میں قائم حسیب فارمیسی کے فراہم کردہ سلوشن میں خرابی تھی ۔ تلنگانہ کے محکمہ صحت و خاندانی بھلائی کے ذرائع کے بموجب تحقیقاتی کمیٹی نے جو 3 سرکاری ڈاکٹرس پر مشتمل تھی ۔ سرجری کے دن استعمال کیے گئے سرجیکل آلات اور آپریشن تھیٹرس کا معائنہ کیا اور اس نتیجہ پر پہونچی کہ حسیب فارمیسی کے فراہم کردہ آر ایل سلوشن میں خرابی تھی یہ بات عثمانیہ جنرل ہاسپٹل میں کرائے گئے ٹسٹ سے ظاہر ہوئی ۔ جو سلوشن فراہم کیے گئے ان میں بکٹیریل انفیکشن پائے گئے ۔ 30 جون کو کی گئی سرجری کے بعد 13 مریضوں کی بینائی متاثر ہوگئی ۔ کمیٹی نے واقعہ کے لیے سرجنس یا ہاسپٹل کو ذمہ دار قرار نہیں دیا ہے کیوں کہ کئی سرجنس نے اس دن دو آپریشن تھیٹرس میں 21 افراد کے آپریشن کیے اور صرف 13 افراد کی ہی بینائی متاثر ہوئی ۔ جن کے آپریشن ایک تھیٹر میں کیے گئے تلنگانہ کے ڈرگ کنٹرول اڈمنسٹریشن نے کمپنی کی طرف سے اس سال کے شروع سے تلنگانہ ریاست کو سپلائی کیے گئے ادویات کے دس لاکھ سے زائد بوتل ضبط کیے ہیں ۔ ایک سو سے زائد نمونوں کی جانچ جاری ہے ۔ رپورٹ کی وصولی کے بعد ہی حکومت کمپنی کے خلاف کارروائی کرے گی ۔ سروجنی دیوی ہاسپٹل میں ہر روز 70 سرجریز میں جن میں 40 موتیا بند آپریشن ہوتے ہیں ۔ ہاسپٹل کے حکام نے کہا کہ اس سال اب تک 20 ہزار سرجریز کیے گئے ہیں ۔۔

TOPPOPULARRECENT