Saturday , June 23 2018
Home / Top Stories / بینک اسکام :چوکیدار سورہا ہے اور چور بھاگ گیا :کپل سبل

بینک اسکام :چوکیدار سورہا ہے اور چور بھاگ گیا :کپل سبل

وجئے مالیا ، للت مودی کے بعد نیروومودی فرار ، این ڈی اے حکومت کو مستعفی ہونا چاہئیے :شردیادو ،وزیراعظم جواب دیں :راہول
نئی دہلی /. بھوپال۔ /18 فبروری (سیاست ڈاٹ کام) ملک میں پنجاب نیشنل بینک اسکام کے بعد مرکز کی نریندر مودی زیرقیادت بی جے پی حکومت پر شدید تنقیدیں کی جارہی ہیں ۔ 2013 ء میں نریندر مودی نے بی جے پی کیلئے انتخابی مہم چلاتے ہوئے جلسوں میں عوام سے خطاب کرتے ہوئے کہا تھا کہ عوام مجھے اس ملک کا چوکیدار بنادیں تو میں دہلی میں بیٹھ کر ملک کے خزانے کی حفاظت کروں گا اور اسے کوئی چھونے کی ہمت نہیں کرسکے گا ۔ 2014 ء کے انتخابات میں نریندر مودی کی کامیابی کے بعد ملک کے اندر بینک اسکامس کا سلسلہ جاری ہے ۔ بینک کو دھوکہ دے کر ملک سے فرار ہونے والے وجئے مالیا کے بعد للت مودی بھی فرار ہوگئے تھے اور اب پنجاب نیشنل بینک اسکام کے بعد نیروو مودی ملک سے فرار ہے ۔ اس مسئلہ پر اپوزیشن پارٹیوں نے وزیراعظم مودی کو تنقید کا نشانہ بنایا ۔ کانگریس کے سینئر لیڈر اور سابق مرکزی وزیر کپل سبل نے کہا کہ پنجاب نیشنل بینک میں ہونے والے اسکام کا وزیراعظم نریندر مودی اور وزیر فینانس ارون جیٹلی کو پہلے سے علم تھا لیکن انہوں نے کوئی کارروائی نہیں کی ۔ کپل سبل نے کہا کہ ہمارے ملک کے چوکیدار پکوڑے تلنے کا مشورہ دے رہے ہیں جبکہ ملک کے حالات یہ ہوگئے ہیں کہ چوکیدار سورہا ہے اور چور بھاگ گیا ۔ انہوں نے کہا کہ مودی حکومت کی ناک تلے اسکینڈل ہورہے ہیں جن کی پرتیں ایک ایک کرکے کھلتی جارہی ہیں اور موجودہ حکومت کی حقیقت بھی عوام کے سامنے عیاں ہورہی ہے ۔

جنتادل یو کے باغی لیڈر شردیادو نے آج نریندر مودی حکومت سے استعفے کا مطالبہ کیا ۔ پنجاب نیشنل بینک نے مبینہ ملٹی کروڑ اسکامس کے بعد انہوں نے الزام عائد کیا کہ مرکز عام ڈپازٹرس کی رقم کو محفوظ کرنے میں ناکام ہوگیا ہے ۔ خدا کے بعد ایک حکومت ہی سب سے طاقتور ہوتی ہے اگر وہ عوام کا پیسہ نہیں بچاسکتی تھی کون بچائے گا ۔ انہوں نے این ڈی اے حکومت سے مطالبہ کیا کہ اسے فوری استعفیٰ دینا چاہئیے ۔ انہوں نے الزام عائد کیا کہ پنجاب نیشنل بینک اسکام کا 90-95 فیصد این ڈی اے حکومت کے دوران ہی ہوا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ ہیروں کے تاجر نیروو مودی دہلی کے حلقوں میں ہیرو بنے ہوئے تھے ۔ موجودہ حکومت نے خود کو سوپر پاور قرار دیا تھا لیکن اب وہ للت مودی اور وجئے مالیا کو واپس لانے میں ناکام ہوگئی ہے ۔ بینکوں کی جانب سے ایک رکشا مالک کو قرضہ دینے کیلئے کئی چھان بین کی جاتی ہے لیکن جس نے 9 ہزار کروڑ روپئے ملک سے لیکر فرار ہوئے ہیں اس کے بار ے میں کچھ نہیں کیا ہے ۔ این ڈی اے حکومت اپنے وعوں میں بری طرح ناکام ہوچکی ہے ۔ ملک کے اندر صحت ، تعلیم اور روزگار کا مسئلہ جوں کا توں ہے ۔ صدر کانگریس راہول گاندھی نے وزیراعظم نریندر مودی اور وزیر فینانس ارون جیٹلی سے کہا کہ وہ 22 ہزار کروڑ کے بینک اسکام پر لب کشائی کریں ۔ ارون جیٹلی اس اسکام کے بعد سے منہ چھپاتے پھیر رہے ہیں ۔ کانگریس نے وزیراعظم مودی کو نشانہ بناتے ہوئے کہا تھا کہ ڈاوس میں منعقدہ ورلڈ اکنامک فورم میں ہندوستانی تاجرکی حیثیت سے ہیروں کے تاجر نیروو مودی نے شرکت کی تھی اس کے باوجود حکومت خاموش رہی۔

TOPPOPULARRECENT