بینک دھوکہ دہی معاملہ۔سابق وزیر سوجناچودھری ای ڈی کے روبرو حاضر ہوں گے

حیدرآباد26نومبر(یواین آئی)سابق مرکزی وزیرو تلگودیشم کے رکن راجیہ سبھا وائی سوجناچودھری جن پر انفورسمنٹ ڈائرکٹوریٹ نے تقریبا5700کروڑ روپئے کی بینکس کو دھوکہ دہی کا الزام لگایا ہے ،پارلیمنٹ کے مجوزہ سرمائی سیش کے بعد ایجنسی کے روبرو حاضر ہوں گے ۔ہفتہ کو تلاشی کے دوران ای ڈی نے رکن پارلیمنٹ اور ان کے ساتھیوں کی جانب سے چلائی جانے والی کمپنیوں کے بینکوں کو 5700کروڑ روپئے کے قرض کی دھوکہ دہی سے متعلق دستاویزات ضبط کئے ۔ساتھ ہی چھ لکثرری کاروں بشمول ایک فیراری کار ،ایک رینج اوور اور ایک مرسڈیز بنز کار کا پتہ چلایا ۔عہدیداروں نے سابق وزیر کو 27نومبر کو حاضر ہونے کی ہدایت دی تھی ۔ای ڈی جس نے حیدرآباد اور دہلی میں سوجنا گروپ آف کمپنیز کے آٹھ مقامات پر تلاشی لی،کئی دستاویزات ضبط کئے ۔ای ڈی نے کہا کہ وہ فاریکس اور فیما کی خلاف ورزیوں کی جانچ کر رہی ہے ۔ای ڈی نے کہا کہ تلگودیشم کے رکن پارلیمنٹ ان کمپنیوں کو چلارہے ہیں۔دوسری طرف تلگودیشم کے رکن پارلیمنٹ نے گزشتہ شب میڈیا سے بات کرتے ہوئے کہاکہ وہ ان کمپنیوں کی ٹیکس چوری کے بارے میں واقف نہیں ہیں ،وہ کسی بھی کمپنی کے چیرمین نہیں ہیں۔انہوں نے کہا کہ 2010میں ہی انہوں نے تین کمپنیوں کے ڈائرکٹر کی حیثیت سے مستعفی ہوگئے ۔

TOPPOPULARRECENT