Saturday , February 23 2019

بین مذہب شادی کرنے والے جوڑے کی ہندو یووا واہنی کی جانب سے زدوکوب

میرٹھ۔12 اپریل (سیاست ڈاٹ کام) ہندویووا واہنی کے بانی موجودہ چیف منسٹر یوگی آدتیہ ناتھ ہیں ۔ اس تنظیم کے کارکنوں نے آج ایک مکان میں زبردستی داخل ہوکر ایک مسلم شخص اور دوسرے مذہب سے تعلق رکھنے والی ایک خاتون کو ایک ساتھ دیکھ کر زدوکوب کیا۔ یوگی آدتیہ ناتھ نے حال ہی میں پولیس کو ہدایت دی ہے کہ ’’بے قصور‘‘ جوڑوں کو ہراساں نہ کیا جائے اور اینٹی رومیو اسکواڈ کو ناخوشگوار واقعات میں ملوث نہیں ہونا چاہئے۔ پولیس کے بموجب یوتھ بریگیڈ نے اس وقت شوروغل کرتے ہوئے ہنگامہ کھڑا کردیا جبکہ بعض مقامی شہریوں نے انہیں اطلاع دی کہ اس شخص نے ایک خاتون اور اپنے دوست کو کرائے پر قیام کی سہولت فراہم کی ہے۔ کارکنوں نے کہا کہ یہ دونوں مبینہ طور پر قابل اعتراض حالت میں پائے گئے تھے۔ پولیس کو بیان دیتے ہوئے تنظیم کے کارکنوں نے کہا کہ خاتون کو دھمکی دے کر چھوڑ دیا گیا جبکہ اس شخص کے خلاف جو مظفر نگر کا ساکن ہے، انسداد فحاشی قانون کے تحت ایک مقدمہ درج کرلیا گیا ہے۔

TOPPOPULARRECENT