Thursday , April 26 2018
Home / شہر کی خبریں / بی آر ایس اسکیم کے ذریعہ عوام پر بھاری جرمانہ

بی آر ایس اسکیم کے ذریعہ عوام پر بھاری جرمانہ

مسئلہ کو حل کرنے کمشنر بلدیہ سے عام آدمی پارٹی کی نمائندگی
حیدرآباد ۔ 8 ۔ نومبر : ( پریس نوٹ ) : بی آر ایس اسکیم تاحال ناقابل عمل ہونے کے باوجود گریٹر حیدرآباد بلدیہ نے اس اسکیم کے تحت 1 لاکھ 67 ہزار 610 درخواست گذاروں سے سالانہ پنالیٹی 100 فیصد ٹیکس وصول کرتے ہوئے عوام پر ایک عظیم بوجھ عائد کررہی ہے ۔ عام آدمی پارٹی کے جوائنٹ سکریٹری تلنگانہ اسٹیٹ و صدر مہیلا ونگ محترمہ ایس نسیم بیگم نے ایک وفد کے ہمراہ کمشنر بلدیہ گریٹر حیدرآباد ڈاکٹر جناردھن ریڈی سے ملاقات کر کے ایک یادداشت پیش کی اور بتایا کہ اب جب کہ بی آر ایس اسکیم پر عدالت کے ذریعے Stay Order ہے اس کے باجود محکمہ بلدیہ کی جانب سے معصوم عوام جو حکومت کے تعاون کے ارادہ سے بی آر ایس کے لیے درخواستیں داخل کیں انہیں بغیر اجازت مکان کی تعمیر پر 100 فیصد جرمانہ عائد کرتے ہوئے ڈبل ٹیکس وصول کررہے ہیں ۔ عام آدمی پارٹی کے ترجمان محترمہ ایس نسیم بیگم نے سوال کیا کہ کیا معصوم عوام اپنے مکانات کو ریگولرائز کرنے کے سلسلہ میں درخواستیں داخل کر کے کوئی جرم کیا ہے اور یہ کہ مذکورہ ہزاروں افراد کی درخواستوں کو ریگولرائز کے نام پر حاصل کیا تھا ۔ ان کا ڈاٹا محکمہ بلدیہ کے ہاتھ لگ گیا ہے اب جب کہ Stay ہے اور نامعلوم اس پر کب عمل آوری ہوگی ۔ انہوں نے دیگر عوامی قائدین سے بھی اپیل کی اس اہم مسئلہ کو حکومت اور ارباب مجاز تک پہنچا کر ایوان اسمبلی میں نمائندگی کریں تاکہ اس مسئلہ کی یکسوئی ہوجائے ۔ اس موقع پر عام آدمی پارٹی کے قائدین محمد بشیر الدین ، محمد سمیع الدین ، ای عبدالقدیر سماجی کارکن محمد علی و قیصر کے علاوہ دیگر موجود تھے ۔۔

TOPPOPULARRECENT