Saturday , January 20 2018
Home / ہندوستان / بی ایس این ایل وایم ٹی این ایل کو خانگیانے کی تردید

بی ایس این ایل وایم ٹی این ایل کو خانگیانے کی تردید

نئی دہلی۔/13مارچ، ( سیاست ڈاٹ کام ) حکومت نے آج بی ایس این ایل اور ایم ٹی این ایل کے خانگیانے کو خارج از امکان قرار دیا ہے گوکہ یہ اعتراف کیا ہے کہ حکومت کے زیر انتظام ٹیلی کام خدمات فراہم کرنے والے اداروںکی معاشی حالت مستحکم نہیں ہے۔ وقف صفر کے دوران ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے وزیر ٹیلی کام مسٹر روی شنکر پرساد نے بتایا کہ حکومت کی یہ کو

نئی دہلی۔/13مارچ، ( سیاست ڈاٹ کام ) حکومت نے آج بی ایس این ایل اور ایم ٹی این ایل کے خانگیانے کو خارج از امکان قرار دیا ہے گوکہ یہ اعتراف کیا ہے کہ حکومت کے زیر انتظام ٹیلی کام خدمات فراہم کرنے والے اداروںکی معاشی حالت مستحکم نہیں ہے۔ وقف صفر کے دوران ایک سوال کا جواب دیتے ہوئے وزیر ٹیلی کام مسٹر روی شنکر پرساد نے بتایا کہ حکومت کی یہ کوشش ہے کہ ان اداروں کو منافع بخش بنایا جائے۔ ایم ٹی این ایل اور بی ایس این ایل کی معاشی صحت بہتر حالت میں نہیں ہے جس کی متعدد وجوہات ہیں ، میں چاہتا ہوں کہ اس مسئلہ پر ایوان میں پورا ایک دن بحث کی جائے۔ تاہم حکومت ان اداروں کو صحتمند بنانے کیلئے اقدامات کررہی ہے۔ مسٹر روی شنکر پرساد نے کہا کہ یہ ادارے سابق میں منافع بخش تھے لیکن اب حالیہ چند برسوں سے نقصانات سے دوچار ہیں۔ ہم اس کی عظمت رفتہ اور کارکردگی کو بحال کرنے کیلئے راہیں تلاش کررہے ہیں۔ انہوں نے بتایا کہ مذکورہ دو کمپنیوں کی مالی حالت کو بہتر بنانے کی ضرورت ہے لیکن خانگیانے کی ہرگز کوشش نہیں کی جائے گی۔ انہوں نے کہا کہ بی ایس این ایل اور ایم ٹی این ایل کی خدمات کو بہتر بنانے کیلئے 25000 موبائیل ٹاورس نصب کردیئے گئے ہیں۔ایک اور سوال کے جواب میں وزیر ٹیلی مواصلات نے بتایا کہ ملک بھر میں ٹیلی کام سبسکرائبرس کی تعداد بہت جلد97.9کروڑ سے ایک بلین تک پہنچ جائے گی۔

TOPPOPULARRECENT