Saturday , November 18 2017
Home / Top Stories / ’’بی جے پی آر ایس ایس کی مخالفت ہی سب سے بڑا جرم‘‘ نتیش اور کجریوال کا الزام

’’بی جے پی آر ایس ایس کی مخالفت ہی سب سے بڑا جرم‘‘ نتیش اور کجریوال کا الزام

پٹنہ ؍ نئی دہلی ۔ 19 فبروری۔(سیاست ڈاٹ کام) جے این یو کے بڑھتے ہوئے تنازعہ کے درمیان مودی حکومت کو آج اپوزیشن کی مزید تنقیدوں کا سامنا کرنا پڑا جب بہار اور دہلی کے چیف منسٹروں نے الزام عائد کیا کہ اُس ( مودی حکومت ) نے اقتصادی محاذ پر اپنی ناکامیوں کی پردہ پوشی کیلئے ایک جذباتی مسئلہ اُٹھاری ہے اور مودی دور حکومت میں بی جے پی اورآر ایس ایس کی مخالفت سب سے بڑا جرم بن گئی ہے ۔ بہار کے چیف منسٹر نتیش کمار نے پٹنہ میں منعقدہ کابینی اجلاس سے باہر نکلتے ہوئے اخباری نمائندوں سے کہاکہ ’’چونکہ وہ ( بی جے پی ۔ آر ایس ایس ) 2014 کے پارلیمانی انتخابات میں بلند بانگ دعوے کرنے کے بعد اقتصادی محاذ پر پریشان کن حد تک ناکام ہوگئے ہیں چنانچہ اپنی ان ناکامیوں کی پردہ پوشی کیلئے ایک جذباتی مسئلہ ( جے این یو تنازعہ ) پیدا کیا ہے ‘‘ ۔نتیش کمار نے جو جے ڈی ( یو ) کے سینئر لیڈر بھی ہیں جے این یو طلبہ یونین کے صدر کنہیا کمار کے خلاف کسی ثبوت کے بغیر غداری کا مقدمہ درج کئے جانے پر مرکز کو پھر ایک مرتبہ اپنی سخت تنقید کا نشانہ بنایا ۔ نتیش کمار نے کہا کہ ’’اگر ان (حکومت ) کے پاس کوئی ثبوت ہے جس سے غداری کے الزامات کے تحت کنہیا کمار کی گرفتاری حق بجانب ثابت کی جاسکتی ہے تو وہ اس ثبوت کو منظرعام پر کیوں نہیں لاتے ؟ ‘‘ ۔ انھوں نے اپنے اس ریمارکس کے ذریعہ کنہیا کمار کے خلاف عائد غداری کے الزامات کے خلاف کانگریس اور بائیں بازو کی جماعتوں کے موقف کی حمایت کی ۔ اس دوران دہلی کے چیف منسٹر اروند کجریوال نے جے این یو تنازعہ کے ضمن میں مرکزی حکومت پر اپنی تنقیدوں میں مزید شدت پیدا کرتے ہوئے کہاکہ موجودہ دور حکومت میں بی جے پی اور آر ایس ایس کی مخالفت کرنا سب سے بڑا جرم بن گیا ہے اور مرکز پر الزام عائد کیا کہ وہ مجرمانہ سرگرمیوں میں ملوث اپنے خامیوں کے خلاف کارروائی کرنے میں ناکام ہوگئی ہے ۔ کجریوال نے ٹوئیٹر پر پوسٹ کردہ اپنے پیغام میں لکھا کہ ’’مرکز کے نئے ہندوستانی تعزیری ضابطہ ( آئی پی سی ) میں اگر آپ بی جے پی کے ہیں تو کسی کا قتل ، عصمت ریزی یا کسی کو زدوکوب کرنا کوئی جرم نہیں ہے ۔ لیکن بی جے پی اور آر ایس ایس کی مخالفت کرنا سب سے بڑا جرم بن گیا ہے ‘‘۔

TOPPOPULARRECENT