Saturday , December 15 2018

بی جے پی فرقہ وارنہ جذبات بھڑکا رہی ہے

ایودھیا مسئلہ پر مودی کا بیان ناقال قبول : سیتا رام یچوری
اگرتلہ 26 نومبر ( سیاست ڈاٹ کام ) ایودھیا تنازعہ کی سماعت کرنے والے ججس کو کانگریس کی جانب سے دھمکانے کے وزیر اعظم نریندر مودی کے الزامات کی مذمت کرتے ہوئے سی پی ایم جنرل سکریٹری سیتارام یچوری نے کہا کہ بی جے پی حکومت ووٹ بینک کو مستحکم کرنے مذہبی کشیدگی کو ہوا دے رہی ہے ۔ سیتارام یچوری نے کہا کہ ناقابل قبول بیانات دیتے ہوئے بی جے پی فرقہ وارانہ تقسیم کرنا چاہتی ہے تاکہ انتخابات میں فائدہ حاصل کیا جاسکے ۔ مودی نے کل اپنی ایک تقریر میں کہا تھا کہ کانگریس نے ان ججس کو مواخذہ کی دھمکی دی تھی جو ایودھیا تنازعہ کی سماعت کرنا چاہتے تھے ۔ یہاں ایک پریس کانفرنس سے خطاب کرتے ہوئے سیتارام یچوری نے کہا کہ اپوزیشن کی جانب سے عدالتی کارروائی میں مداخلت کا الزام انتہائی ناقابل قبول ہے ۔ مودی نے اس بیان کے ذریعہ فاشسٹ رجحان کو تقویت دی ہے جس سے جمہوریت کو نقصان ہوگا ۔ انہوں نے کہا کہ مودی کو اب پتہ چل چکا ہے کہ ملک کے عوام ان کی حکومت کے حق میں نہیں ہیں اور یہی وجہ ہے کہ وہ نفرت انگیز تقاریر کر رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT