Wednesday , February 21 2018
Home / ہندوستان / بی جے پی قائدین کی عوام کے ساتھ چائے نوشی

بی جے پی قائدین کی عوام کے ساتھ چائے نوشی

وزیراعظم کی ’’من کی بات‘‘ کے دوران گجرات میں چائے کی سیاست

احمدآباد ۔ 26نومبر ( سیاست ڈاٹ کام ) کانگریس کے وزیراعظم نریندر مودی کو ماضی کا چائے والا قرار دے کر مذاق اڑانے کی یادداشت پر جوابی کارروائی کرتے ہوئے بی جے پی قائدین بشمول امیت شاہ اور ارون جیٹلی نے آج وزیراعظم کے ریڈیو پروگرام ’’من کی بات ‘‘ کے دوران عوام کے ساتھ چائے نوشی کی ۔ جب کہ گجرات میں عنقریب انتخابات مقرر ہے ۔ بی جے پی نے چائے کے ساتھ من کی بات پروگرام کا اہتمام کیا تھا ۔ 182 اسمبلی نشستوں کیلئے 5128 رائے دہی مراکز قائم کئے گئے ہیں ۔ تمام مراکز پر یہ پروگرام منعقد کیا گیا ۔ بی جے پی کے قومی صدر امیت شاہ نے مسلم غالب آبادی والے علاقہ دریا پور میں سینکڑوں مقامی افراد اور پارٹی کارکنوں کے ساتھ چائے پیتے ہوئے من کی بات سنی ۔ مرکزی وزیر فینانس ارون جیٹلی بھی اداجان علاقہ سورت کے ایک مرکز رائے دہی پر موجود تھے ۔ گجرات کے چیف منسٹر وجئے روپانی نے مودی کے ماہانہ پروگرام کی سماعت مورا دیہات ضلع پنچ محل میں کی ۔ جب کہ ڈپٹی چیف منسٹر نتن پٹیل اپنے انتخابی حلقہ مہسانہ کے ایک مرکز رائے دہی پر عوام کے ساتھ چائے نوشی میں مصروف تھے اور ریڈیو پر وزیراعظم کا پروگرام ’من کی بات ‘ نشر ہورہا تھا ۔ پارٹی کے دیگر قائدین جو مختلف مقامات پر اس پروگرام میں شریک ہوئے ان میں مرکزی وزراء پیوش گوئل ‘ دھرمیندر پردھان ‘ اوما بھارتی ‘ سمرتی ایرانی ‘ جول اورم ‘ پرشوتم روپالا ‘ صدر گجرات بی جے پی جیتو واگھانی اور دیگر کئی ریاستی وزراء ‘ ارکان اسمبلی اور چند ارکان پارلیمنٹ تھے ۔ ایرانی جوناگڑھ میں پارٹی کے پروگرام میں شرکت کررہی تھی ۔ انہوں نے ایک پریس کانفرنس میں کہا کہ گجرات کے عوام آئندہ اسمبلی انتخابات میں کانگریس کو اُس کی بڑی دشمن اور گجرات دشمن ذہنیت کا اچھا سبق سکھائیں گے ۔ مودی27اور 29نومبر کو گجرات کا دورہ کرنے والے ہیں ۔

 

 

TOPPOPULARRECENT