Tuesday , November 21 2017
Home / شہر کی خبریں / بی جے پی پر تلنگانہ میں مرچ کسانوں کے مسئلہ پر شور مچانے کا الزام

بی جے پی پر تلنگانہ میں مرچ کسانوں کے مسئلہ پر شور مچانے کا الزام

ریاستی حکومت کسانوں کے تحفظ کے لیے ہر ممکن اقدامات میں مصروف ، ای راجیشور ریڈی کا بیان
حیدرآباد ۔ 9۔ مئی (سیاست نیوز) گورنمنٹ وہپ ای راجیشور ریڈی نے الزام عائد کیا کہ بی جے پی مرچ کے کسانوں کی امدادی قیمت کے نام پر ڈرامہ بازی کر رہی ہے تاکہ حکومت کو بدنام کیا جائے۔ میڈیا کے نمائندوں سے بات چیت کرتے ہوئے راجیشور ریڈی نے کہا کہ گزشتہ ایک ہفتہ سے بی جے پی قائدین مرچ کسانوں کے مسئلہ پر روزانہ سیاسی مقصد براری کیلئے کچھ نہ کچھ بیانات جاری کر رہے ہیں۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی قائدین کی جانب سے مارکٹ یارڈ کا دورہ کرتے ہوئے کسانوں کو مشتعل کرنے کے بجائے انہیں چاہئے کہ مرکزی حکومت پر اثر انداز ہوتے ہوئے کسانوں کو بچانے کی کوشش کریں۔ انہوں نے کہا کہ بی جے پی فلور لیڈر کشن ریڈی نے مارکٹ یارڈ کا دورہ کرتے ہوئے مرچ کی فروخت میں رکاوٹ پیدا کرنے کی کوشش کی ہے۔ انہوں نے بتایا کہ ریاستی حکومت نے کسانوں کے تحفظ کیلئے ہر ممکن اقدامات کئے ہیں اور حکومت کی جانب سے مرچ کی خریدی عمل میں لائی جارہی ہیں۔ بی جے پی قائدین کو مرچ کی امدادی قیمت کے بارے میں کوئی علم نہیں۔ ریاستی وزیر ہریش راؤ پر بی جے پی قائدین کی تنقید کو نامناسب قرار دیتے ہوئے گورنمنٹ چیف وہپ نے کہا کہ مرکز کی جانب سے کسانوں کیلئے فی کنٹل 5000 روپئے امدادی قیمت کا اعلان کیا گیا ہے جبکہ مارکٹ میں کسانوں کو اس سے زائد قیمت وصول ہورہی ہیں ۔ اگر بی جے پی کو کسانوں سے ہمدردی ہے تو قائدین کو چاہئے کہ مرکز سے زائد امدادی قیمت کا اعلان کرائیں۔ انہوں نے کہا کہ کسانوں کے مسائل کے سلسلہ میں ریاستی حکومت کے ساتھ مل کر بی جے پی قائدین کو مرکز سے نمائندگی کرنی چاہئے ۔ انہوں نے کہا کہ کسانوں اور زرعی شعبہ کی بھلائی کے سلسلہ میں تلنگانہ ریاست سارے ملک کیلئے مثالی ہے ، اس بات کا اعتراف مرکزی وزراء اور بی جے پی کے مرکزی قائدین نے کئی بار کیا ہے۔ کسانوں کے قرض کی معافی کے سلسلہ میں تفصیلات جاننے کیلئے مہاراشٹرا کے وفد نے تلنگانہ کا دورہ کیا اور حکومت کی ستائش کی ۔ انہوں نے بی جے پی قائدین سے سوال کیا کہ کیا وہ مرکزی وزراء اور بی جے پی قائدین کی جانب سے تلنگانہ حکومت کی ستائش سے واقف نہیں؟ انہوں نے الزام عائد کیا کہ مرکزی حکومت کے رویہ کے باعث تلنگانہ کے کسانوں کو بھاری نقصان ہورہا ہے۔ انہوں نے کہا کہ مرکزی وزیر بنڈارو دتاتریہ کی جانب سے دیا گیا بیان باعث افسوس ہے جس میں انہوں نے پلاننگ کمیشن کی جانب سے جاری کردہ فنڈس کسانوں کے لئے جاری کرنے کی بات کہی ۔ تمام ریاستوں کو مرکز کی جانب سے فنڈس فراہم کئے جاتے ہیں اور وہ مختلف ترقیاتی کاموں کیلئے ہوتے ہیں۔ انہوں نے دتاتریہ مطالبہ کیا کہ وہ کسانوں کے حق میں مرکز سے خصوصی پیاکیج کے اعلان کے اقدامات کریں ۔ راجیشور ریڈی نے اپوزیشن کو سخت تنقید کا نشانہ بنایا تھا اور کہا کہ وہ کسانوں کو مشتعل کرنے کی کوشش کر رہے ہیں۔

TOPPOPULARRECENT