بی جے پی کا خوف دلاکر مسلمانوں کو ڈرانے کی کوشش ناکام ہوگی

ملک پیٹ میں مظفرعلی خان کی انتخابی مہم، تلگودیشم امیدوار کے حق میں عوام کی زبردست تائید

حیدرآباد۔24نومبر(سیاست نیوز) اسمبلی حلقہ ملک پیٹ کے سپوٹا باغ میںانتخابی جلسہ عا م سے خطاب کرتے ہوئے عظیم اتحاد کے تلگودیشم پارٹی امیدوار محمد مظفرعلی خان نے کہاکہ پچھلے نو سالوں سے ملک پیٹ کی عوام کے اتحاد کو ذاتی مفادات کے لئے استعمال کرتے ہوئے اپنی جبیں بھرنے والی مقامی جماعت کی قیادت آج عظیم اتحاد کو تنقید کا نشانہ بنارہی ہے ‘ اور بی جے پی کا خوف دکھاکر مسلم رائے دہندوں کو دوبارہ ورغلانے کی کوششیں کی جارہی ہیں۔ اب ملک پیٹ کے مسلمانوں کو بی جے پی کے نام سے ڈرانے کی کوشش کی جارہی ہے جبکہ اسمبلی حلقہ ملک پیٹ میں بی جے پی کا وجود ہی ختم ہوگیا۔ انہوں نے کہاکہ حقیقت تو یہ ہے کہ کانگریس اور تلگودیشم پارٹی جیسی سکیولر جماعتوں کی وجہہ سے بھی پورے جنوبی ہند میں بی جے پی اپنے پیر جمانے میںاب تک ناکام رہی ہے۔ انہوں نے کہاکہ مرکز کی بی جے پی حکومت نے جب ایوان پارلیمنٹ میں طلاق ثلاثہ پر ارڈیننس پیش کیاتب لوک سبھا میںاس کو پاس کرلیاگیا مگر راجیہ سبھا میںآرڈیننس کو ناکام بنانے میں اہم رول اگر کسی نے ادا کیاہے تو وہ غلام نبی آزاد اور احمد پٹیل ہیں۔ انہو ںنے کہاکہ وہیں تلگودیشم پارٹی نے راجیہ سبھا میںموجود رہ کر آرڈیننس کی مخالفت کی جبکہ ٹی آر ایس نے دونوں ایوانو ںمیںبل کی تائید میںووٹ دیا۔ اور بی جے پی کے ناپاک عزائم کو مضبوط کرنے کی کوشش کی ۔محمدمظفر علی خان نے کہاکہ اسی ٹی آر ایس کی حمایت میںآج مقامی جماعت کھڑی ہوئی ہے۔ انہوں نے مزیدکہاکہ ٹی آر ایس اور مجلس کے قائدین ساتھ ملکر تلنگانہ میں بی جے پی کو مضبوط کرنے کی کوشش کررہے ہیں مگر جب تک عظیم اتحاد تلنگانہ میں سرگرم ہے تب تک فرقہ پرستوں کے عزائم کو کبھی کامیاب نہیںہونے دیاجائے گا۔ محمد مظفر علی خان نے افسوس ظاہر کرتے ہوئے کہاکہ متعلقہ نوسال میںاگر کوئی ترقیاتی کام سپوٹا باغ میںانجام دئے ہوتے تو آج انہیں اپوزیشن کے انتخابی جلسہ کو روکنے کے لئے اپنے حواریوں کا استعمال کرنے کی ضرورت نہیں پڑتی تھی۔ انہو ںنے کہاکہ جہاں پر بھی عظیم اتحاد کا انتخابی جلسہ ہورہا ہے وہاں پر متعلقہ رکن اسمبلی اور ان کے حواری پہنچ کر مقامی لوگوں کو ڈرا او ردھمکاکر جلسہ روکنے کی کوشش کررہے ہیں۔انہو ںنے کہاکہ انتخابی جلسوں میںاتحاد کی اپیل کرنے والی قیادت خود ہی میدا ن میںاتر کر مسلمانوں کے درمیان انتشار پیدا کرنے کی کوشش کررہی ہے۔ مظفر علی خان نے سمبلی حلقہ ملک پیٹ کی عوام بالخصوص سپوٹا باغ کے لوگوں سے اپیل کیا کہ وہ گمراہ کن پروپگنڈوں کا شکار نہ ہوں ۔
اور فرقہ پرستی کا خاتمہ کرنے کے لئے عظیم اتحاد کے امیدواروں کے حق میںاپنے ووٹ کا استعمال کرتے ہوئے بابا صاحب بھیم رائو امبیڈکر ترتیب کردہ دستور ہند کے تحفظ کی اس لڑائی سکیولر طاقتوں کو مضبوط بنائیں۔سینئر کانگریسی قائدین ظفر اقبال ‘ مجتبیٰ عابدی‘ امجد علی خان‘ اعجاز‘ ایم این خان اشفاق او ردیگر نے بھی خطاب کیا۔

TOPPOPULARRECENT