Tuesday , November 21 2017
Home / Top Stories / بی جے پی کو بلندی تک پہنچانے کیلئے مودی کی مقبولیت سے استفادہ

بی جے پی کو بلندی تک پہنچانے کیلئے مودی کی مقبولیت سے استفادہ

پارٹی ہیڈکوارٹر کی تقریب سنگ بنیاد سے امیت شاہ کا خطاب
نئی دہلی۔/18اگسٹ، ( سیاست ڈاٹ کام ) یہ دعویٰ کرتے ہوئے کہ وزیر اعظم نریندر مودی دنیا کے مقبول ترین لیڈر ہیں بی جے پی صدر امیت شاہ نے آج کہا ہے کہ پارٹی فی الحال نقطہ عروج پر ہے لیکن عوامی حمایت برقرار رکھنے کیلئے پارٹی کارکنوں کو جوش اور جذبہ سے کام کرنے کی ضرورت ہے جبکہ بی جے پی کو اقتدار تنظیمی صلاحیتوں اور مودی کی مقبولیت سے نصیب ہوا ہے۔ پارٹی کے نئے ہیڈکوارٹر ( دفتر ) کی تعمیر کیلئے تقریب سنگ بنیاد جس میں مرکزی قائدین بشمول وزیر اعظم نے شرکت کی مخاطب کرتے ہوئے انہوں نے کہا کہ مودی حکومت کی مقبولیت بدستور برقرار ہے جیسا کہ حلف برداری کے موقع پر تھی۔ انہوں نے بتایا کہ نریندر مودی کی شکل میں ہمارے پاس دنیا کا مقبول ترین لیڈر موجود ہے اور ہماری یہ ذمہ داری ہے کہ عام آدمی کی توقعات کو مایوس نہ کریں اور بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے عوام کی تائید اور پارٹی کی بنیادوں کو مضبوط اور مستحکم کیا جائے۔ مسٹر امیت شاہ نے کہا کہ نریندر مودی کی قیادت میں ہم نے یہ فیصلہ کیا ہے کہ بی جے پی کا سنہرا دور ہماری آخری منزل نہیں ہوگی اور آج کی اس کامیابی پر مطمئن نہیں ہونا چاہیئے بلکہ اسمان کی بلندیوں تک جانا ہوگا۔ دین دیال اُپادھیائے مارگ پر واقع 2ایکڑ اراضی پر محیط نئے آفس کے طرز تعمیر میں پارٹی کلچر اور قوم پرستی کے ایجنڈہ کی جھلک نظر آئے گی۔ یہ آفس جدید مواصلاتی نظام اور کانفرنس ہال کی سہولت سے آراستہ ہوگا جہاں سے مرکزی قیادت،

ضلع اور بلاک سطح کے کارکنوں سے رابطہ قائم کریں گے۔ تقریب سنگ بنیاد میں امیت شاہ نے تقریباً نصف گھنٹہ تک یگنہ کیا جس میں مودی اور دیگر سرکردہ قائدین نے شرکت کی۔ پارٹی کو اُمید ہے کہ نیا آفس ڈسمبر 2018 تک تیار ہوجائیگا اور سابق وزیر اعظم اٹل بہاری واجپائی کی سالگرہ کے موقع پر افتتاح عمل میں آئیگا۔ مذکورہ تقریب میں بی جے پی کے تمام سابق صدور کو بھی مدعو کیا گیا جبکہ 10رکنی پارٹی کے 11کروڑ ارکان بنانے میں ورکرس اور لیڈروںکی خدمات کو امیت شاہ نے خراج تحسین ادا کیا اور بتایا کہ آج بی جے پی کے 1000 ارکان اسمبلی،300 ارکان پارلیمنٹ ہیں اور ملک کی 12ریاستوں میں اپنے بل بوتے پر یا حلیفوں کی تائید سے برسراقتدار ہے۔انہوں نے کہا کہ ملک کے 580 اضلاع میں بی جے پی کے دفاتر قائم کرنے کا منصوبہ ہے اور اب تک 250مقامات پر اراضیات حاصل کرلی گئی ہیں تاکہ پارٹی کو عوامی سطح پر مزید توسیع دی جاسکے اور پارٹی کے نظریات کی تشہیر کی جاسکے اور اس مقصد کیلئے پارٹی کی تاریخ پر آڈیو اور ویڈیو فلمیں بھی تیار کی جائیں گی۔وزیر اعظم نریندر مودی نے آج یہاں بھارتیہ جنتا پارٹی (بی جے پی) کے نئے ہیڈ کوارٹر کا سنگ بنیاد رکھا اور کہا کہ یہ صرف ایک عمارت نہیں ہوگی بلکہ کارکنوں کی کئی نسلوں کی قربانیوں کی علامت ہوگی۔

مسٹر مودی نے کہا کہ بی جے پی کو اپنے قیام کے وقت سے ہی ہر موڑ پر کئی طرح کی مشکلات کا سامنا کرنا پڑا ہے اور اس کی ہر کوشش کو غلط نقطہ نظر سے دیکھا گیا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ کانگریس کو انگریزوں کے دور حکومت میں بھی ایسی صورت حال کا سامنا نہیں کرنا پڑا ہو گا، جس سے گزشتہ 50 برسوں میں بی جے پی کے کارکنوں کو گزرنا پڑا ہے ۔ انہوں نے کہاکہ “ہمارا عزم ہر شخص کو ساتھ لے کر چلنے اور سب کے لئے کام کرنے کا ہے کیونکہ ہماری ترجیح ملک کی تعمیر ہے ۔ ہر ایک کو خودسپردگی سے اپنا فرض نبھانا چاہئے اور معاشرے کے ہر طبقے کو آگے بڑھانا چاہئے “۔بی جے پی کے نئے ہیڈکوارٹر کا آج سنگ بنیاد رکھا گیا ، جس کے لئے آج بھومی پوجن کی گئی۔ اس موقع پر بی جے پی کے صدر امیت شاہ، پارٹی کے سینئر لیڈران لال کرشن اڈوانی، مرلی منوہر جوشی، مرکزی وزراء راج ناتھ سنگھ، ارون جیٹلی، ایم وینکیا نائیڈو ، نتن گڈکری اور پارٹی کے کئی دیگر لیڈر ان شامل ہوئے ۔ مسٹرنریندر مودی نے کہا کہ بی جے پی کی لیڈرشت کا موقف ہمیشہ واضح رہا ہے کہ ہم کبھی بھی اپنے نظریے اور اصولوں کے ساتھ سمجھوتہ نہیں کریں گے ، چاہے ہمیں اپوزیشن میں ہی بیٹھنا پڑے ۔مسٹر امیت شاہ نے اس موقع پر کہا کہ پارٹی نے ایک نئی بلندی حاصل کی ہے اور یہ سب کارکنوں کی سخت محنت کی بدولت ممکن ہوا ہے۔
بی جے پی کا نیا ہیڈکوارٹر آئی ٹی او کے نزدیک دین دیال اپادھیائے روڈ پر تعمیر کیا جارہا ہے ۔پارٹی کے نئے ہیڈ کوارٹر جدید سہولیات سے لیس کیا جائے گا، جس میں وائی فائی کی سہولیت کے ساتھ 70 کمرے ہوں گے ۔ اس کے احاطے میں گھر میں انڈرگراؤنڈ پارکنگ، آڈیٹوریم، لائبریری اور اسٹوڈیو بھی ہوگا۔ اس کی تعمیر 2019 کے لوک سبھا انتخابات سے پہلے مکمل ہونے کی توقع ہے ۔

وزیراعظم مودی سے
ارون جیٹلی کی ملاقات
نئی دہلی۔ 18 اگست (سیاست ڈاٹ کام)وزیرفینانس ارون جیٹلی نے وزیراعظم نریندر مودی سے ایک گھنٹہ طویل ملاقات کی اور آر بی آئی کے نئے گورنر کے تقرر کے بارے میں تبادلہ خیال کیا۔ یہ عہدہ 4 ستمبر سے مخلوع رہے گا۔ اس عہدہ پر رگھورام راجن موجود ہیں ۔ ان کے جانشین کی تلاش جاری ہے اس سلسلہ میں چند ناموں پر غور کیا جارہا ہے۔ آئندہ ماہ نئے گورنر کا اعلان کریں گے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT