Sunday , June 24 2018
Home / سیاسیات / بی جے پی کی کامیابی میں اپوزیشن کا سب سے بڑا رول

بی جے پی کی کامیابی میں اپوزیشن کا سب سے بڑا رول

نئی دہلی 15 اگست ( سیاست ڈاٹ کام) سینئر بی جے پی لیڈر ایل کے اڈوانی نے لوک سبھا انتخابات میں پارٹی کی شاندار کامیابی کو اپوزیشن کی مرہون منت قرار دیا اور کہا کہ گذشتہ دس سال میں سابقہ حکومت کی جانب سے ہوئے زبردست کرپشن اور اس کی غلطیوں کے نتیجہ میں بی جے پی کو کامیابی حاصل ہوئی ہے ۔ 2014 کے عام انتخابات کو بے مثال قرار دیتے ہوئے سینئر بی ج

نئی دہلی 15 اگست ( سیاست ڈاٹ کام) سینئر بی جے پی لیڈر ایل کے اڈوانی نے لوک سبھا انتخابات میں پارٹی کی شاندار کامیابی کو اپوزیشن کی مرہون منت قرار دیا اور کہا کہ گذشتہ دس سال میں سابقہ حکومت کی جانب سے ہوئے زبردست کرپشن اور اس کی غلطیوں کے نتیجہ میں بی جے پی کو کامیابی حاصل ہوئی ہے ۔ 2014 کے عام انتخابات کو بے مثال قرار دیتے ہوئے سینئر بی جے پی لیڈر نے مزید کہا کہ پارٹی ورکرس نے انتخابات کی لڑائی میں اہم رول ادا کیا ہے ۔

اڈوانی نے اپنی قیامگاہ پر قومی پرچم لہرانے کے بعد اظہار خیال کرتے ہوئے کہا کہ انہوں نے 1952 کے بعد سے تمام انتخابات دیکھے ہیں۔ جب 2014 کے انتخابات ہوگئے تو انہیں احساس ہوا کہ ان کے اور ان کی پارٹی کیلئے یہ انتخابات بے مثال رہے ہیں۔ انہیں خوشی ہے کہ اس طرح کے نتائج پہلے کبھی نہیں رہے ۔ ہماری پارٹی کے ورکرس نے اس بار کے انتخابات میں بہت سخت محنت کی ہے ۔ انہوں نے تاہم کہا کہ وہ اس بات سے انکار نہیں کرینگے کہ لوک سبھا انتخابات میںپارٹی کی کامیابی میں سب سے بڑا رول اپوزیشن کا رہا ہے جو ان کے خلاف مقابلہ کر رہی تھی ۔ انہوں نے کہا کہ گذشتہ دس سال کی حکمرانی کے دوران اگر سابقہ حکومت نے اتنی زیادہ غلطیاں نہیں کی ہوتیں تو شائد اس بار بھی انتخابی نتائج اس طرح کے نہ ہوتے ۔ مئی میں ہوئے لوک سبھا انتخابات میں بی جے پی کو 282 نشستوں پر کامیابی ملی ہے اور اس نے پہلی مرتبہ اپنے بل پر پارلیمنٹ میں اکثریت حاصل کی ہے ۔

پارٹی نے انتخابات میں کامیابی کا اپنا ہی سابقہ ریکارڈ بہتر بنایا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ نریندر مودی کی قیادت میں چلائی گئی زبردست انتخابی مہم نے بھی کامیابی میں اہم رول ادا کیا ہے لیکن اس کامیابی میں سب سے بڑا رول اپوزیشن کا ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس شاندار کامیابی کے بعد ہم سے عوام کی امیدوں میں بھی اضافہ ہوگیا ہے ۔ آج لال قلعہ کی فصیل سے کی گئی بہتر تقریر پر وزیر اعظم سے اظہار تشکر کرتے ہوئے اڈوانی نے کہا کہ انتخابی نتائج کے بعد وزیر اعظم نے کسی تحریری تقریر کو قبول نہیں کیااور خود اپنے بل پر تقریر کی ہے ۔ انہوں نے کہا کہ اس تقریر کا عوام پر اچھا اثر ہوا ہے ۔

TOPPOPULARRECENT