Thursday , July 19 2018
Home / Top Stories / ’’بی جے پی کے دفاتر دہشت گردی کے اڈے‘‘

’’بی جے پی کے دفاتر دہشت گردی کے اڈے‘‘

بی جے پی لیڈر گری راج سنگھ کے اشتعال انگیز بیان پر رابڑی دیوی کا شدید ردعمل
پٹنہ 15 مارچ (سیاست ڈاٹ کام) راشٹریہ جنتادل سربراہ لالو یادو کی اہلیہ و سابق چیف منسٹر بہار رابڑی دیوی نے چہارشنبہ کو بی جے پی قائد گری راج سنگھ کے اشتعال انگیز بیان پر شدید ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہاکہ پورے ملک کے دہشت گرد بی جے پی کے دفاتر میں بیٹھتے ہیں۔ رابڑی نے بی جے پی کو انتباہ دیتے ہوئے کہاکہ وہ عوام سے معافی مانگے ورنہ 2019 ء میں عوام اُنھیں معاف نہیں کرے گی۔ واضح رہے کہ ارریا لوک سبھا ضمنی انتخابات میں آر جے ڈی کی کامیابی کے بعد گری راج سنگھ نے بیان دیا تھا کہ ’’یہ علاقہ (ارریا) دہشت گردوں کا گڑھ بن جائے گا‘‘۔ اُنھوں (گری راج) نے مزید کہا تھا کہ ’’ارریا صرف سرحدی علاقہ نہیں ہے، یہ صرف نیپال اور بنگال سے بھی متصل نہیں ہے بلکہ یہ علاقہ شدت پسندانہ نظریات کو جنم دینے والا بھی ہے اور یہ کہ صرف بہار کے لئے ہی نہیں بلکہ پورے ملک کے لئے خطرہ ہے کہ ارریا دہشت گردوں کا محفوظ پناہ گاہ بن جائے گا‘‘۔ گری راج کے اِس بیان پر شدید ردعمل ظاہر کرتے ہوئے کہاکہ پورے ملک کے دہشت گرد بی جے پی کے دفتروں میں بیٹھتے ہیں۔ اِسی لئے عوام نے اُنھیں اِس کا جواب دیا ہے۔ اِس لئے یہ لوگ بوکھلاہٹ کا شکار ہوگئے۔ اُنھوں نے کہاکہ بہار اور یوپی کے عوام نے اُنھیں اُن کی اوقات دکھادی ہے، اِس لئے بہتر ہوگا کہ وہ اپنی زبان قابو میں رکھیں ورنہ 2019 ء میں عوام اُنھیں معاف نہیں کرے گی۔ قبل ازیں انتخابی مہم کے دوران بی جے پی رکن پارلیمنٹ نیتی آنند رائے نے بھی کہا تھا کہ اگر ارریا سے آر جے ڈی امیدوار کامیاب ہوجاتا ہے تو ارریا آئی ایس آئی ایس کی محفوظ پناہ گاہ بن جائے گا ۔ جبکہ بی جے پی امیدوار پردیپ سنگھ کی کامیابی سے علاقہ میں حب الوطنی کے جذبات پیدا ہوں گے اور یہ علاقہ قوم پرستوں کا گڑھ بن جائے گا۔ دوسری طرف بی جے پی قائدین کے بیان پر ردعمل ظاہر کرتے ہوئے جتن رام مانجھی نے بھی مذمت کی ہے۔ مانجھی نے کہاکہ ہم حکومت سے اپیل کرتے ہیں کہ وہ محتاط انداز میں بات کرے کیوں کہ ارریا میں صرف مسلمان ہی نہیں رہتے بلکہ ایس سی ، ایس ٹی اور دیگر ہندو بھی رہتے ہیں۔ تو یہ علاقہ کس طرح سے آئی ایس آئی ایس کا گڑھ بڑھ سکتا ہے۔ واضح رہے کہ ارریا لوک سبھا سیٹ پر آر جے ڈی کے امیدوار سرفراز عالم نے اپنے بی جے پی حریف پردیپ کمار سنگھ کو شکست دے کر اپنا قبضہ برقرار رکھا ہے۔

TOPPOPULARRECENT