Tuesday , June 19 2018
Home / سیاسیات / بی جے پی کے پروگرام میں شتروگھن سنہا نظر انداز

بی جے پی کے پروگرام میں شتروگھن سنہا نظر انداز

پٹنہ ۔ 14 ۔ اپریل : ( سیاست ڈاٹ کام) : سابق فلمی اداکار اور بی جے پی رکن پارلیمنٹ شتروگھن سنہا نے آج بتایا ہے کہ امبیڈکر یوم پیدائش تقاریب کے موقع پر پارٹی کے میگا شو میں شرکت کے لیے انہیں کوئی دعوت نامہ موصول نہیں ہوا ہے جب کہ اس بڑے جلسہ میں بہار اسمبلی انتخابات کے لیے مہم شروع کی جانے والی ہے ۔ حلقہ پٹنہ صاحب سے دوسری مرتبہ پارلیمنٹ کے

پٹنہ ۔ 14 ۔ اپریل : ( سیاست ڈاٹ کام) : سابق فلمی اداکار اور بی جے پی رکن پارلیمنٹ شتروگھن سنہا نے آج بتایا ہے کہ امبیڈکر یوم پیدائش تقاریب کے موقع پر پارٹی کے میگا شو میں شرکت کے لیے انہیں کوئی دعوت نامہ موصول نہیں ہوا ہے جب کہ اس بڑے جلسہ میں بہار اسمبلی انتخابات کے لیے مہم شروع کی جانے والی ہے ۔ حلقہ پٹنہ صاحب سے دوسری مرتبہ پارلیمنٹ کے لیے منتخبہ شتروگھن سنہا نے کہا کہ صدر بی جے پی امیت شاہ اور نہ ہی ریاستی قیادت نے انہیں مذکورہ تقریب میں مدعو کیا ہے ۔ ممبئی کی قیام گاہ سے انہوں نے ٹیلی فون پر بتایا کہ میں مقامی رکن پارلیمنٹ ہونے کے باوجود کسی بیانر ، بورڈنگ اور پوسٹر پر میرا نام یا تصویر آویزاں کی گئی ۔ بی جے پی ایم پی نے کہا کہ چونکہ انہیں کوئی دعوت نامہ موصول نہیں ہوا ۔ اس لیے وہ تقریب سے دور رہنا ہی مناسب سمجھیں اور وہ اتوار کی شب پٹنہ واپس ہوں گے ۔ مذکورہ پروگرام میں پارٹی صدر امیت شاہ ، مرکزی وزیر داخلہ راجناتھ سنگھ ، بہار سے وابستہ مرکزی وزراء بشمول روی شنکر پرساد ، رادھا موہن سنگھ ، راجیو پرتاپ روڈی

اور گری راج سنگھ کے علاوہ ریاستی قائدین سوشیل کمار موڈی اور نندکشور یادو شرکت کریں گے ۔ شتروگھن سنہا نے بتایا کہ وہ پارٹی کے پابند ڈسپلن کارکن ہیں اور فلمی کیرئیر کو ترک کر کے بی جے پی میں شامل ہوئے ہیں اور وہ پارٹی کو نقصان پہنچانے کا تصور بھی نہیں کرسکتے ۔ انہوں نے یہ دعویٰ کیا کہ ریاست میں کئی لیڈرس ان کی شخصیت سے خطرہ محسوس کرتے ہیں ۔ یہی وجہ ہے کہ انہیں اس پروگرام سے دور رکھا گیا ہے ۔ تاہم انہوں نے کسی لیڈر کی شناخت سے انکار کردیا ۔ یہ دریافت کیے جانے پر کہ ان کے بغیر بھی پارٹی بہار میں اسمبلی انتخابات کی مہم شروع کرنا چاہتی ہے ۔ شتروگھن سنہا نے کہا کہ ایک عرصہ قبل پارٹی کی مہم کس نے شروع کی تھی ۔ میں ان کی کامیابی کے لیے نیک تمناؤں کا اظہار کرتا ہوں ۔ تاہم بی جے پی میں شتروگھن سنہا کو نظر انداز کیے جانے پر چیف منسٹر نتیش کمار نے سیاسی فائدہ اٹھانے کی کوشش کی اور کہا کہ ایک پارٹی اپنے مقبول عام لیڈر کی پرواہ نہیں کرتی تو وہ کس طرح عوام کا پاس و لحاظ کرے گی ۔

TOPPOPULARRECENT