Saturday , November 18 2017
Home / شہر کی خبریں / بی یو ایم ایس انٹرنس ، کئی طلبہ ہال ٹکٹس ڈاؤن لوڈ کرنے سے قاصر

بی یو ایم ایس انٹرنس ، کئی طلبہ ہال ٹکٹس ڈاؤن لوڈ کرنے سے قاصر

این ٹی آر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنس کے بعض اقدامات سے طلبہ و اولیائے طلبہ میں بے چینی
حیدرآباد ۔ 4 ۔ ستمبر : ( نمائندہ خصوصی ) : ڈاکٹر این ٹی آر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنس کی جانب سے اتوار 6 ستمبر کو بی یو ایم ایس انٹرنس ٹسٹ کا اہتمام کیا گیا ہے ۔ اس سلسلہ میں یونیورسٹی نے دو اعلامیہ جاری کئے پہلے نوٹیفیکشن میں کہا گیا کہ ڈاکٹر این ٹی آر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنس کے نام 800 روپئے کا ڈیمانڈ ڈرافٹ تیار کر کے نظامیہ طبی کالج چارمینار میں داخل کریں ۔ اس کے بعد دوسرا نوٹیفیکیشن جاری کیا گیا جن کے ذریعہ ہدایت دی گئی کہ 800 روپئے کا چالان آن لائن داخل کیا جائے جس کے لیے 1050 روپئے چارج کئے گئے یعنی طلباء وطالبات پر یونیورسٹی نے 250 روپئے کا زائد بوجھ عائد کیا ۔ ساتھ ہی یہ بھی ہدایت دی گئی کہ درخواست فارمس یونیورسٹی میں داخل کریں ۔ کئی طلباء وطالبات نے پہلے اعلامیہ کے مطابق درخواستیں داخل کی ۔ دوسری جانب جن طلبہ کو سائنس مضامین میں 50 فیصد سے زائد نمبرات حاصل نہیں ہوئے اور انٹر میڈیٹ میں زبان دوم جن کی عربی اور اردو نہیں تھی ان کی درخواستیں بھی مسترد کردی گئیں ۔ ایسے طلباء وطالبات کی تعداد 32 بتائی جاتی ہے ۔ اہم بات یہ ہے کہ این ٹی آر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنس نے یونیورسٹی کو جن امیدواروں نے ہارڈ کاپی نہیں بھیجی ان کی فہرست جاری ہی نہیں کی جس سے طلباء وطالبات اور ان کے سرپرستوں میں بے چینی پائی جاتی ہے ۔ ڈاکٹر این ٹی آر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنس کے حکام اور نظامیہ طبی کالج و شفاخانہ کے ذمہ داروں کی لاپرواہی و کوتاہی کے باعث بے شمار طلبہ اپنے ہال ٹکٹس ڈاؤن لوڈ نہیں کرسکے ۔ 3 ستمبر کو طلبہ نے ہال ٹکٹ ڈاؤن لوڈ کئے ، 4 ستمبر کو جب امیدواروں نے ہال ٹکٹس ڈاؤن لوڈ کرنے کی کوشش کی تب سائٹ بند بتائی گئی ۔ ایسے میں طلبہ کیلئے ہال ٹکٹ حاصل کرنے صرف ایک دن باقی رہ گیا ہے ۔ حیرت کی بات یہ ہے کہ نظامیہ طبی کالج و شفاخانہ کی پرنسپل سے لے کر دیگر عہدیدار اس معاملہ میں طلبہ کی رہنمائی کرنے سے قاصر ہیں ۔ حد تو یہ ہے کہ پرنسپل کے پاس ملاقات کا وقت ہی نہیں رہتا۔ اگر سینکڑوں بچے ہال ٹکٹس حاصل کرنے سے محروم ہوجاتے ہیں تو اس کا ذمہ دار کون ہوگا ۔ بہر حال طلبہ اور اولیائے طلبہ میں پھیلی ہوئی بے چینی دور کرنا این ٹی آر یونیورسٹی آف ہیلتھ سائنس اور نظامیہ طبی کالج و شفاخانہ کے عہدیداروں کا فرض ہے ۔

TOPPOPULARRECENT