Saturday , June 23 2018
Home / جرائم و حادثات / بے روزگاروں کو روزگار کا جھانسہ ، کروڑہا روپئے ہڑپنے والا گرفتار

بے روزگاروں کو روزگار کا جھانسہ ، کروڑہا روپئے ہڑپنے والا گرفتار

سنٹرل زون ٹاسک فورس پولیس کی کارروائی، فرضی شناخت کا استعمال
حیدرآباد 9 اپریل (سیاست نیوز) بے روزگار نوجوانوں کو سرکاری ملازمتیں فراہم کرنے کا جھانسہ دے کر کروڑہا روپئے ہڑپنے والے ایک دھوکہ باز کو سنٹرل زون ٹاسک فورس ٹیم نے گرفتار کرلیا۔ بتایا جاتا ہے کہ 32 سالہ بی ایلیش جو بی کام گرائجویٹ اعظم پورہ کا ساکن ہے، تعلیم مکمل کرنے کے بعد وہ عابڈس پر واقع اسپائسی بار میں وہ ملازمت کرنے لگا لیکن سڑک کی توسیع میں اِس بار کو منہدم کئے جانے کے بعد وہ بے روزگار ہوگیا اور اُس نے کے رویندر سوامی نامی شخص سے ملاقات کی جو خود کو سکریٹریٹ کا ملازم ظاہر کیا تھا اور حیدرآباد واٹر ورکس بورڈ میں اُسے اٹنڈر کا جاب فراہم کرنے کا وعدہ کرتے ہوئے اُس سے دو لاکھ روپئے حاصل کرلیا لیکن وہ دھوکہ دہی کا شکار ہوگیا۔ ملازمت نہ ملنے پر رقم کی واپسی کے مطالبہ کے نتیجہ میں رویندر سوامی نے ایلیش سے کہاکہ وہ دیگر بے روزگار نوجوانوں کو اُس سے تعارف کروائیں۔ ایلیش نے رویندر سوامی کی ایماء پر ایک کروڑ 24 لاکھ روپئے 37 بے روزگار نوجوانوں سے حاصل کیا اور اِس رقم کو سوامی کے حوالے کردیا۔ کسی بھی نوجوان کو ملازمت فراہم نہ کئے جانے کے بعد وہ دوبارہ دھوکہ دہی کا شکار ہوگیا اور وہ خود نوجوانوں کو دھوکہ دینے کا منصوبہ تیار کیا جس کے تحت وہ خود کو جی ایچ ایم سی وٹرنری شعبہ کا ملازم ظاہر کرتے ہوئے ایک فرضی شناختی کارڈ تیار کیا اور خود کو جی ایچ ایم سی میں اثر و رسوخ رکھنے والا ظاہر کرتے ہوئے 28 بے روزگار نوجوانوں سے ایک کروڑ 60 لاکھ روپئے بٹورلیا اور اِس رقم سے شادی کرلی اور پرتعیش زندگی بسر کررہا تھا۔ بے روزگار نوجوانوں سے بچنے کے لئے اُس نے اپنا موبائیل فون نمبر بھی تبدیل کرلیا تھا۔ ٹاسک فورس ٹیم نے دھوکہ باز کا پتہ لگاتے ہوئے اُسے گرفتار کرلیا اور اُسے مشیرآباد پولیس اسٹیشن کے حوالے کردیا۔

TOPPOPULARRECENT