بے روزگاری کے خاتمہ کیلئے ممکنہ اقدامات

نارائن کھیڑ میں ٹی آر ایس امیدوار بی بی پاٹل کا خطاب

نارائن کھیڑ میں ٹی آر ایس امیدوار بی بی پاٹل کا خطاب

نارائن کھیڑ۔/18اپریل، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) حلقہ پارلیمان ظہیرآباد کے ٹی آر ایس امیدوار مسٹر بھیم راؤ بسوانت راؤ پاٹل نے کہا کہ علحدہ تلنگانہ ریاست کی تشکیل جدید صرف اور صرف ٹی آر ایس سے ہی ممکن ہے اور ٹی آر ایس سے ہی تلنگانہ کے عوام کی تقعات کی تکمیل ہوسکتی ہے۔ ریاست تلنگانہ کی ترقی اور تلنگانہ عوام کی فلاح و بہبود اس وقت تک ممکن نہیں تاوقتیکہ ٹی آر ایس سربراہ مسٹر کے چندر شیکھر راو کو ریاست تلنگانہ کا چیف منسٹر نہ بنایا جائے۔ مسٹر بی بی پاٹل کل رات نارائن کھیڑ میں ڈسٹرکٹ آرگنائزنگ سکریٹری تلگودیشم ضلع میدک و سابق سرپنچ میجر گرام پنچایت نارائن کھیڑ مسٹر اشوک کمار شیٹکار کی ٹی آر ایس میں شمولیت کے موقع پر مسٹر اشوک کمار شٹیکار کی قیامگاہ پر مخاطب کررہے تھے۔انہوں نے کہا کہ ریاست تلنگانہ میں اگر ٹی آر ایس برسر اقتدار آجائے تو میناریٹی، ایس سی، ایس ٹی اور بی سی طبقات کی ترقی اور ان کی فلاح و بہبود کیلئے خصوصی توجہ دی جائے گی۔ علاوہ ازیں ریاست تلنگانہ کو درپیش اہم مسائل جیسے برقی کی قلت، پینے کے پانی، زرعی اغراض کیلئے پانی، کسانو ں کو درپیش مسائل، غریب عوام کیلئے بہتر سے بہتر طبی آلات سے آراستہ ہاسپٹلس کے علاوہ بے روزگار جیسے مسئلہ کے خاتمہ کیلئے ممکنہ اقدامات کئے جائیں گے۔ مسٹر بی بی پاٹل نے بتایا کہ تلنگانہ کے تمام پارلیمانی و حلقہ جات اسمبلیوں سے ٹی آر ایس امیدواروں کی کامیابی یقینی ہے۔ انہوں نے عوام سے پرزور اپیل کی کہ وہ حلقہ پارلیمان ظہیرآباد کی نشست سے انہیں ( بی بی پاٹل ) کو اور حلقہ اسمبلی نارائن کھیڑ سے ٹی آر ایس امیدوار مسٹر ایم بھوپال ریڈی کو بھاری اکثریت سے کامیاب بنائیں۔اس موقع پر حلقہ اسمبلی نارائن کھیڑ کے ٹی آر ایس امیدوار مسٹر ایم بھوپال ریڈی نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ مسٹر اشوک کمار شیٹکار کی ٹی آر ایس میں شمولیت سے پارٹی کو ایک نئی جہت ملی ہے۔ اس موقع پر ٹی آر ایس قائدین مسرز وینکٹ رام ریڈی، رویندر نائک، پربھاکر، کشن راؤ ایڈوکیٹ، ماروتی یادو، پنڈاری یادو، نواب خان کے علاوہ تلگودیشم سے ٹی آر ایس میں شمولیت اختیار کرنے والے مسرز اشوک کمار شیٹکار، الکری انجیا، محمد عبدالخلیل مدینہ، لطیف ، بابا، جاوید، رشید، واجد، مجو، شادل، قیوم، یادگیری، لکشمن، پاشاہ کے علاوہ دیگر کو مسٹر بی بی پاٹل اور بھوپال ریڈی نے ٹی آر ایس کا کھنڈوا ڈال کر خیرمقدم کیا۔

TOPPOPULARRECENT