Thursday , December 14 2017
Home / Top Stories / تاج محل پر سپریم کورٹ کی یوپی حکومت کو پھٹکار‘ عدالت عظمی نے کہاکہ ‘ تاج محل ایک ہی ہے ‘ ایک بار تباہ ہوگیاتودوبارہ نہیں بنے گا

تاج محل پر سپریم کورٹ کی یوپی حکومت کو پھٹکار‘ عدالت عظمی نے کہاکہ ‘ تاج محل ایک ہی ہے ‘ ایک بار تباہ ہوگیاتودوبارہ نہیں بنے گا

نئی دہلی۔ سپریم کورٹ نے یوپی کی یوگی حکومت کو پھٹکا ر لگاتے ہوئے تاج محل کے اردگرد ملٹی لیول پارکنگ بنانے کی اجاز ت دینے سے انکار کردیا ہے۔ سپریم کورٹ نے پیر کے روز ایک پٹیشن پر سماعت کے دوران کہاکہ تاج محل ایک ہی ہے ۔

ایک بار تباہ ہوگیا تودوبارہ نہیں بنے گا۔ سپریم کورٹ نے کہاکہ تاج محل کہ پانچ سو میٹر کے دائرہ میں گاڑیو ں کے چلنے پر پابندی جاری رہے گی ۔

سپریم کورٹ نے تاج محل اور اس کے آس پاس کے علاقوں میں تاج ٹریپوزیم زون ( ٹی جیڈ) کی حفاظت کے لئے یوپی حکومت کی منصوبہ بندی پر اپنی ناراضگی کا اظہار کیا۔ یوپی حکومت نے تاج محل کے محفوظ علاقوں میں کثیر پارکنگ بنانے کے لئے 11درختوں کو کاٹنے کے لئے سپریم کورٹ سے اجازت طلب کی ہے۔ سپریم کورٹ نے یوپی حکومت سے کہاکہ اگرہ میں آلودگی اعلی سطح پر ہے ‘ ایسے میںیو پی حکومت کو اس طرح کی تعمیراتی کام کی اجازت نہیں دی جاسکتی ۔

عدالت نے یوپی حکومت سے کہاکہ آپ کے لئے تاج محل کی حفاظت کے لئے کوئی طویل مدتی منصوبہ نہیں ہے او ریہی سب سے بڑی دقعت ہے ۔

بتادیں کے یوپی حکومت تاج محل کے مشرقی گیٹ سے ایک کیلومیٹر دور کثیر سطحی پارکنگ بنوانا چاہتی ہے۔ سپریم کورٹ نے کہاکہ ہم کسی تعمیراتی کام کے خلاف نہیں ہیں ‘لیکن تعمیراتی کام او رماحول میں توازن برقرار رکپنا چاہئے۔ عدالت نے ٹی ٹی زیڈاتھارٹی کو سمن بھیج کر جواب مانگا ہے۔

Top Stories

TOPPOPULARRECENT