Tuesday , December 12 2017
Home / سیاسیات / تاج کے بعد اب ہمایوں کے مقبرے پر سیاست

تاج کے بعد اب ہمایوں کے مقبرے پر سیاست

لکھنؤ۔ 25اکتوبر (سیاست ڈاٹ کام) تاج محل پر ‘لفظی جنگ’ کے بعد اب شیعہ سنٹرل وقف بورڈ کے خط سے ہمایوں کے مقبرے پرنیا تنازعہ کھڑا ہوتا نظر آ رہا ہے ۔ایودھیا میں خوبصورت رام مندر کی تعمیر کی زبردست وکالت کرنے والے اتر پردیش شیعہ سنٹرل وقف بورڈ کے چیئرمین وسیم رضوی نے وزیر اعظم نریندر مودی کو خط لکھ کر ہمایوں کے مقبرے کو منہدم کرانے اور اس زمین کوقبرستان کے نام پر مختص کرنے کی اپیل کی ہے ۔رضوی نے آج یہاں ‘یواین آئی’سے کہا کہ دہلی کے کئی مسلم رہنماؤں نے ان سے قومی دارالحکومت علاقہ (این سی آر) میں قبرستان کے لئے زمین کا مطالبہ کیا ہے ۔ بورڈ کے پاس اس علاقے میں خالی زمین نہیں ہے ، لہذا انہوں نے انکار کردیا۔ رضوی نے کہا کہ انہوں نے حال ہی میں وزیر اعظم کو ایک خط لکھا ہے جس میں انہوں نے کہا ہے کہ دہلی میں مسلمانوں کی بڑی آبادی موجود ہے ۔ ہمایوں کا مقبرہ 35 ایکڑ میں واقع ہے ۔ تین یا چار ایکڑ میں تو ان کا مزار ہی ہے ۔مقبرے کی دیکھ ریکھ پرکروڑوں روپے خرچ کیے جا رہے ہیں۔ اس سے کوئی آمدنی نہیں ہے ۔ ویسے بھی ہمایوں نے اصل ہندوستانیوں کو ہراساں ہی کیا تھا۔ان کا دعویٰ تھاکہ تبدیلی مذہب اور مذہبی مقامات کو منہدم کرانے اورہندوستان کو لوٹنے میں ہمایوں بھی پیچھے نہیں تھا، اس لئے اس کے مقبرے کو گرانے میں کوئی حرج نہیں ہے ۔

TOPPOPULARRECENT