Tuesday , November 21 2017
Home / اضلاع کی خبریں / تحفظات کیلئے ’سیاست‘ کی مہم اہم کارنامہ

تحفظات کیلئے ’سیاست‘ کی مہم اہم کارنامہ

محمد اعجاز الزماں صدر عازمین حج و عمرہ ویلفیر اسوسی ایشن کا بیان
حیدرآباد۔/4اکٹوبر، ( دکن نیوز) جناب محمد اعجاز الزماں صدر مکہ و مدینہ عازمین حج و عمرہ ویلفیر اسوسی ایشن نے ریاست تلنگانہ میں مسلم تحفظات اور اس کے ذریعہ مسلمانوں کو تعلیم، روزگار اور دیگر اُمور میں مراعات حاصل کرنے کیلئے ریاستی حکومت کو 12فیصد تحفظات کیلئے دباؤ ڈالتے ہوئے عمل آوری کے لئے ریاست تلنگانہ میں جو لگاتار کوشش کی جارہی ہے اس پر جناب عامر علی خاں نیوز ایڈیٹر روز نامہ ’سیاست‘ اور روز نامہ ’سیاست‘ کی شبانہ روز محنت اور کاوشیں اور اس کے لئے مسلمانوں میں شعور بیدار کرنے کا اضلاع کے دوروں کا پروگرام ترتیب دیا گیا ہے جس میں انہوں نے نظام آباد، ورنگل ، کریم نگر میں کامیابی حاصل کی ہے۔ اس پر مبارکباد پیش کی اور کہا کہ اگر اس طرح ملت اسلامیہ کے جیالے افراد سامنے آئیں تو مستقبل میں مسلمان ہر سمت اپنے آپ کو آگے بڑھاتے ہوئے ملک بھر میں اپنی شناخت پیدا کرسکیں گے۔ انہوں نے کہا کہ سیاست کی جانب سے مسلم تحفظات کا مسئلہ ہی نہیںبلکہ مسلم طلباء و نوجوانوں کو بیرونی ممالک میں تعلیم کی سہولت مہیا کرانے کی ضمن میں ریاستی حکومت نے جو اقدام کیا ہے اس پر طلباء کی رہبری کی ہے جس کی وجہ سے آج کئی طلباء و نوجوان بیرونی ممالک میں تعلیم حاصل کررہے ہیں۔اس کے ساتھ ساتھ حکومت کی ’شادی مبارک ‘ اسکیم میں بھی سیاست کی رہبری، دوبدو ملاقات پروگرام کے ذریعہ لڑکے اور لڑکیوں کو رشتہ ازواج سے جوڑنا اور شادی کو آسان بنانے کا عزم کرنا وہ بھی ایک موثر کارنامہ ہے۔ انہوں نے کہا کہ سیاست نے اپنا اپنی اس مہم میں 12فیصد تحفظات کی عمل آوری تک تحریک میں جوڑنے کے لئے بااثر شخصیات کو لینے کا پروگرام بنایا ہے وہ بھی بڑی اہمیت کا حامل ہوگا۔انہوں نے کہا کہ مکہ و مدینہ عازمین حج و عمرہ ویلفیر اسوسی ایشن جو نہ صرف عازمین حج کے مسائل اور ان کی رہبری و رہنمائی میں عرصہ دراز سے تگ و دو کررہی ہے اگر ہمارے سفر میں عامر علی خان صاحب جیسے نوجوان قلمکار و صحافی کا تعاون اسوسی ایشن کو حاصل رہے تو ہم ان کے کاندھے سے کاندھا ملا کر کام کرنے کا تہیہ کرچکے ہیں اور عنقریب مکہ و مدینہ عازمین حج و عمرہ ویلفیر اسوسی ایشن کے فتر ( مانصاحب ٹینک ، ہمایوں نگر ) میں 12فیصد مسلم تحفظات کی عمل آوری کے لئے ایک مشاورتی اجلاس منعقد کرتے ہوئے ’سیاست‘ کی اس تحریک کا ساتھ دینے کیلئے ہر ایک کو یاد دلوایا جائے گا اوراُن سے وعدہ لیا جائے گا۔

TOPPOPULARRECENT