Wednesday , September 19 2018
Home / دنیا / ترک زیرقبضہ علاقہ پر دولت اسلامیہ کے حملے

ترک زیرقبضہ علاقہ پر دولت اسلامیہ کے حملے

بیروت ۔ 6 جولائی (سیاست ڈاٹ کام) دولت اسلامیہ کے جنگجوؤں نے رقہ کے قریب ترک زیرقبضہ علاقہ پر حملے کئے تاکہ اسے کردوں اور عرب افواج سے دوبارہ حاصل کیا جاسکے۔ دولت اسلامیہ کے حملے کا سحر کے وقت آغاز ہوا اور وہ عین عیسیٰ تک پہنچنے میں کامیاب ہوگئے۔ کرد پیپلز پروٹیکشن یونٹس کے ترجمان خلیل نے کہا کہ جھڑپیں قصبہ کے اندر بھی جاری ہیں تاکہ دولت اسلامیہ کو پسپا کیا جاسکے۔ 23 جولائی کو عرب اور کرد فوج نے قصبہ عین عیسیٰ پر قبضہ کرلیا تھا۔ قبل ازیں جہادیوں سے قصبہ تل ابیض حاصل کرلیا گیا تھا۔ انسانی حقوق کی تنظیم شامی رصدگاہ نے کہا کہ حملہ کامیاب رہا۔ جہادی جنگجو عین عیسیٰ پر اور قریبی دیہاتوں پر قابض ہوگئے ہیں۔ کرد اور عرب فوج کے ترجمان نے کہا کہ دولت اسلامیہ دونوں صوبوں پر بڑے پیمانے پر حملہ کررہی ہے لیکن عین عیسیٰ پر اس کے قابض ہونے کی انہوں نے تردید کردی۔ تل ابیض پر قبضہ اس گروپ کیلئے ایک کاری ضرب ہے، جس نے اس قصبہ کو ہتھیاروں اور جنگجوؤں کے حصول کیلئے استعمال کیا تھا۔ قبضہ کے بعد مخالف دولت اسلامیہ افواج نے عین عیسیٰ کی طرف پیشرفت کی اور اس پر اور سابق فوجی اڈہ پر قبضہ کرلیا۔ حالیہ ہفتوں میں دولت اسلامیہ کی افواج نے کئی جوابی حملے کئے ہیں جن میں ایک چھوٹا سرحدی قصبہ کوبانی بھی شامل ہیں جس پر قبضہ کیلئے جہادی 4 ماہ سے جنگ کررہے تھے۔ امریکی زیرقیادت فضائی حملوں کی تائید سے کرد فوج جہادیوں کو جنوری میں کوبانی سے نکال باہر کرنے میں کامیاب رہی۔ اس علامتی فتح کو بین الاقوامی اخبارات کی شہہ سرخیوں میں جگہ دی گئی تھی۔ یہ فوج جوابی حملہ کرنے میں کامیاب رہی لیکن پسپا ہونے سے پہلے دولت اسلامیہ نے 200 افراد کو ہلاک کردیا۔

TOPPOPULARRECENT