تشدد اور صف آرائی سے پاک امن اور تعاون تیز رفتار ترقی کا ضامن

نئی دہلی ؍ اسلام آباد ۔ 13 جون (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی نے وزیراعظم پاکستان نواز شریف کو مکتوب تحریر کرتے ہوئے کہا کہ وہ باہمی تعلقات کے ’’نئے دور‘‘ کا آغاز ایک ایسے ماحول میں کرنا چاہتے ہیں جو صف آرائی اور تشدد سے پاک ہو۔ انہوں نے کہا کہ وہ پاکستان کے ساتھ تعاون کے منتظر ہیں۔ 2 جون کے وزیراعظم پاکستان نواز شریف کے مکتوب

نئی دہلی ؍ اسلام آباد ۔ 13 جون (سیاست ڈاٹ کام) وزیراعظم نریندر مودی نے وزیراعظم پاکستان نواز شریف کو مکتوب تحریر کرتے ہوئے کہا کہ وہ باہمی تعلقات کے ’’نئے دور‘‘ کا آغاز ایک ایسے ماحول میں کرنا چاہتے ہیں جو صف آرائی اور تشدد سے پاک ہو۔ انہوں نے کہا کہ وہ پاکستان کے ساتھ تعاون کے منتظر ہیں۔ 2 جون کے وزیراعظم پاکستان نواز شریف کے مکتوب کا جواب دیتے ہوئے وزیراعظم نریندر مودی نے کہا کہ ہندوستان اور پاکستان کے درمیان تعلقات امن، دوستی اور تعاون کے ہونا چاہئے جن سے ہمارے نوجوانوں کیلئے زبردست مواقع حاصل ہوں گے۔ ایک خوشحال مستقبل ہمارے عوام کا منتظر ہوگا اور پورے علاقہ کی ترقی تیز رفتار ہوجائے گی۔ انہوں نے جاریہ ہفتہ کے اوائل میں کراچی ایرپورٹ پر دہشت گرد حملہ کی مذمت کرتے ہوئے بے قصور جانوں کے اس بلا سوچے سمجھے بربریت پر مبنی حملہ میں ضائع ہوجانے پر دلی تعزیت پیش کی۔ نریندر مودی نے کہا کہ دورہ دہلی کے موقع پر نواز شریف سے باہمی تعلقات اور نظریات پر تبادلہ خیال سے ان کی حوصلہ افزائی ہوئی۔ انہوں نے کہا کہ وہ نواز شریف اور ان کی حکومت کے ساتھ قریبی تعاون کرنا چاہتے ہیں جو صف آرائی اور تشدد کے ماحول سے پاک ہوں تاکہ باہمی تعلقات کی نئی راہیں کھولی جائیں۔ انہوں نے کہا کہ نواز شریف نے اپنے مکتوب میں اپنے دورہ دہلی پر اظہاراطمینان کیا ہے۔

دونوں قائدین نے باہمی تعلقات کے مستقبل کے بارے میں تبادلہ خیال کیا ہے۔ مودی نے تقریب حلف برداری میں نواز شریف کی شرکت پر ان کا شکریہ ادا کرتے ہوئے کہا کہ ان کی اور دیگر علاقائی قائدین کی تقریب حلف برداری میں شرکت سے نہ صرف اس تقریب کی شان و شوکت دوبالا ہوگئی بلکہ اس علاقہ میں جمہوریت کے استحکام کا جشن منایا گیا۔ یہ ہماری اجتماعی امیدوں اور مشترکہ مستقبل کی عکاسی کرتا ہے۔ مودی نے اپنے مکتوب میں تحریر کیا کہ وہ اس موقع سے استفادہ کرتے ہوئے کراچی میں اور موٹروں کے قافلہ پر دہشت گرد حملہ کی شدید مذمت کرتے ہیں اور اس بربریت کی کارروائی میں بے قصور جانوں کے ضائع ہونے پر تہہ دل سے تعزیت پیش کرتے ہیں۔ نواز شریف کے مکتوب پر انہوں نے ان کا شکریہ ادا کیا اور ان کی والدہ کیلئے ساڑی کا تحفہ روانہ کرنے پر بھی شکریہ ادا کرتے ہوئے اس خیرسگالی علامت کی ستائش کی۔ دریں اثناء آج سربراہ فوج جنرل بکرم سنگھ نے وزیراعظم نریندر مودی سے ملاقات کرکے بند دروازہ کے تین گھنٹے طویل اجلاس میں ملک کی صیانتی صورتحال کی تفصیلات سے واقف کروایا۔

TOPPOPULARRECENT