Tuesday , November 21 2017
Home / اضلاع کی خبریں / تعلیمی شعبہ کے مسائل کی یکسوئی کا مطالبہ

تعلیمی شعبہ کے مسائل کی یکسوئی کا مطالبہ

کریم نگر میں طلبہ تنظیم کا احتجاج، پولیس کے ساتھ دھکم پیل
کریم نگر۔/20جولائی، ( سیاست ڈسٹرکٹ نیوز) شعبہ تعلیم کے درپیش مسائل کی یکسوئی میں حکومت انتہائی لاپرواہی کا مظاہرہ کررہی ہے ، ٹی ڈی پی ضلع صدر سی ایچ وجئے رمنا راؤ نے سخت تنقید کی۔ ٹی ایس ایس ایف کے زیر اہتمام کلکٹریٹ کے سامنے منظم کردہ احتجاجی مظاہرہ اور کلکٹریٹ کے اندر داخل ہونے کی کوشش کے دوران پولیس اور احتجاجیوں کے درمیان کچھ دیر قوت کی آزمائی ہوئی دھکم پیل کے بعد کچھ افراد کو اندر جانے کی اجازت دی گئی۔ جوائنٹ کلکٹر سری دیوا سنہا کو یادداشت کی، اس موقع پر وجئے رمنا راؤ نے مخاطب کرتے ہوئے کہا کہ تلنگانہ تحریک میں طلباء وطالبات کو استعمال کیا گیا اور کے سی آر آج اس کے نتیجہ میں اقتدار پر ہیں اور طلباء برادری کے مسائل کو بھلا بیٹھے ہیں۔ ہر ضلع کو 500 کروڑ مختص کرنے کے لئے جی او جاری کرنے کے علاوہ منظوری دینے کو بھلا بیٹھے ہیں۔ کارپوریٹ تعلیمی ادارہ جات بہت بھاری فیس زبردستی وصول کررہے ہیں، حکومت خاموش تماشائی بنی ہے بلکہ ان کی حوصلہ افزائی کرنے کا الزام عائد کیا۔ حکومت سرکاری اسکولوں میں بنیادی سہولتوں کی فراہمی میں بھی ناکام ہے، ٹی این ایس ایف قومی جوائنٹ ایکشن کمیٹی رکن رمیش، ریاستی ضلع قائدین رویندر، نوین یادو، سرینواس راؤ، سری کانت، اویناش، اجئے ریڈی، شراون، راجیش، پراوین، سشانت، ونود، ٹی ڈی پی مقامی صدر کلیاڈپو آگیا، ضلع صدر ترجمان شیوا راملو کرشنا وغیرہ شریک تھے۔

TOPPOPULARRECENT