Saturday , September 22 2018
Home / شہر کی خبریں / تعلیم و ہنر اور وقت کی صحیح منصوبہ بندی ترقی کے اہم زینے

تعلیم و ہنر اور وقت کی صحیح منصوبہ بندی ترقی کے اہم زینے

ملت کی نسل نو کو قابل بنانا وقت کا تقاضہ ، اہل ثروت مسلمان آگے آئیں ، ورنگل میں جلسہ تقسیم انعامات سے جناب عامر علی خاں کا خطاب

ملت کی نسل نو کو قابل بنانا وقت کا تقاضہ ، اہل ثروت مسلمان آگے آئیں ، ورنگل میں جلسہ تقسیم انعامات سے جناب عامر علی خاں کا خطاب
حیدرآباد ۔ 7 ۔ جولائی : ( سیاست نیوز ) : تعلیم ، ہنر اور وقت کی صحیح منصوبہ بندی ترقی یافتہ قوم کے زینے ہیں ۔ جن اقوام نے ان کو گلے سے لگایا عروج ان کا مقدر بنا ہے ۔ مسلمانان دکن کا پچاس سال قبل دنیا کے اہل ثروت میں شمار ہوتا تھا ۔ پولیس ایکشن کے بعد تعلیم ، ہنر اور وقت کی صحیح منصوبہ بندی کی کمی سے مسلمانان دکن زوال کی طرف رواں دواں ہیں ۔ موجودہ حال زار یہ ہے کہ ایس سی اور ایس ٹی جیسے پسماندہ طبقات سے بھی نیچے ہمارا زوال ہے ۔ آج پھر مسلمانان دکن کا عروج ہونا ہے اجتماعیت ، زکواۃ کا صحیح استعمال ، اتحاد ، استادوں کا احترام ، لگن و جستجو کے ساتھ تعلیمی و علمی میدان میں نئی نسل کو تیار کرنا والدین اور استادوں کی اہم ذمہ داری ہے ۔ ان حقائق کا اظہار ورنگل میں الفیضان ایجوکیشنل اینڈ ویلفیر سوسائٹی ورنگل کے زیر اہتمام 7 جولائی بروز منگل بوقت 11 بجے دن بمقام آبنوس فنکشن ہال ایل بی نگر ورنگل میں ’ تقسیم نوٹ بکس اور دسویں جماعت کے ٹاپرس میں کیاش ایوارڈ ‘ کی حوالگی کے موقع پر مخاطب کرتے ہوئے جناب عامر علی خاں نیوز ایڈیٹر روزنامہ سیاست نے اپنے صدارتی خطاب میں کیا ۔ سلسلہ خطاب کو جاری رکھتے ہوئے جناب عامر علی خاں نے کہا کہ اردو میڈیم طلباء میں خود اعتمادی کی کمی ہے ۔ سخت محنت کرنے والوں کے لیے کوئی چیز نا ممکن نہیں ہے ۔ اردو میڈیم کے طلباء اپنی سوچ بدلیں اور نئی امنگ کے ساتھ تعلیمی میدان میں آگے بڑھیں ، دنیا کی کامرانی آپ کے جھولی میں ہوگی ۔ انہوں نے اہل ثروت حضرات سے اپیل کی کہ اردو میڈیم ذہین طلباء کی کفالت کریں اور ڈاکٹر ، انجینئر اور آئی پی ایس اور کلکٹر اور ہنر کے ماہر بننے میں اپنا کلیدی رول ادا کریں ۔ آج تلنگانہ میں لگ بھگ پچاس لاکھ مسلمان آباد ہیں اگر ان میں صرف ایک لاکھ اہل ثروت مسلمان صرف سال میں ایک لاکھ زکواۃ دیں تو ایک سو کروڑ جمع ہوں گے جس سے ترقی کی نئی راہیں کھل سکتی ہیں ۔ آج مسلمان آسان چیز کی طرف راغب ہورہا ہے ۔ کاہلی ، سستی اور ناخواندگی کو دور کرنا دورحاضر کا تقاضہ ہے ۔ حکومت تلنگانہ کی مراعات سے مسلمانان تلنگانہ خاطر خواہ مستفید نہیں ہوپارہے ہیں ۔ اس کی وجہ تعلیم سے دوری اور معلومات کی کمی ہے ۔ آج سے چند سال قبل شعبہ جنگلات میں 4 ہزار جائیدادیں خالی تھیں ۔ بھرتی کے دوران مسلمانان تلنگانہ 4 فیصد ریزرویشن ہونے کے باوجود بھی قابل اہلیت رکھنے والے مسلمانوں کی کمی تھی ۔ لہذا ہم کو اعلیٰ و ادنی جائیدادوں کے قابل نسل نو کو تیار کرنا ہے ۔ انہوں نے الفیضان سوسائٹی کی خدمات کو قابل افتخار ، قابل رشک اور قابل قدر بتلاتے ہوئے ذمہ داروں کو مبارکباد دیتے ہوئے ان کی خدمات کی ستائش کی ۔ مہمان خصوصی جناب شاہد مسعود ایڈیشنل کمشنر گریٹر ورنگل نے جلسہ کو خطاب کرتے ہوئے کہا کہ اللہ تعالیٰ سے ہمیشہ اضافہ علم کی دعا کرنی چاہئے ۔ اردو میڈیم کے طلباء اپنی سوچ کو مثبت بنائیں اور افق علم پر مہر و ماہ بن کر چمکیں کیوں کہ علم انبیاء کی میراث ہے ۔ نبی کریم ﷺ نے فرمایا میں علم کا شہر ہوں اور حضرت علیؓ دروازہ ہیں ۔ علم حاصل کرنا موجودہ دور کا اہم تقاضہ ہے ۔ کامیابی کا راز وقت کی پابندی ، ٹی وی کا کم استعمال اور انٹرنیٹ کا مناسب استعمال ہے ۔ آج طلباء کو صحیح سمت میں کامیابی کے لیے تیار کرنا اہم تقاضہ وقت ہے ۔ محمد صابر عالم امیر مقامی جماعت اسلامی ہند نے مہمان خصوصی کی حیثیت سے خطاب کرتے ہوئے موجودہ دور میں علم کی اہمیت پر سیر حاصل روشنی ڈالی اور طلباء کو خود اعتمادی کے ساتھ آگے بڑھنے کا مشورہ دیا ۔ جناب محمد اقبال درد نے کہا کہ اردو میڈیم کے طلباء آج شاندار زندگی گذار رہے ہیں ۔ محنت سے ہر چیز حاصل ہوجاتی ہے ۔ محنت کرنے سے غربت ترقی کی راہ میں رکاوٹ نہیں بنتی ہے ۔ اساتذہ سے انہوں نے خواہش کی کہ وہ اپنی قابلیت صد فیصد طلباء میں منتقل کریں ۔ جناب محمد خواجہ رحیم صدر یونیس ویلفیر سوسائٹی اور اکبر محی الدین ضیا جرنلسٹ ، محمد الیاس تلنگانہ اردو ٹیچرس اسوسی ایشن صدر ضلع ورنگل اور محمد عثمان جوائنٹ سکریٹری محبوبیہ پنجتن ایجوکیشنل سوسائٹی ورنگل نے اعزازی مہمان خصوصی کی حیثیت سے شرکت کی ۔ مہمانان کے ہاتھوں ضلع ورنگل کی اردو میڈیم ٹاپر گورنمنٹ ہائی اسکول مدور کی طالبہ فریعہ آفرین کو محمد افضل صاحب مرحوم ٹیچر کے موسومہ اعزاز اور کیاش ایوارڈ سے نوازا گیا ۔ گورنمنٹ ضلع پریشد اسکول مدور کی جویریہ توقیر کو عبدالغفور کے موسومہ ایوارڈ اور کیاش ایوارڈ سے نوازا گیا ۔ گورنمنٹ ہائی اسکول اردو میڈیم چنتل ورنگل کی طالبہ عشرت سلطانہ کو محمد یعقوب شریف کے موسومہ اعزاز سے مومنٹو اور کیاش پرائز سے نوازا گیا ۔ محبوبیہ پنجتن ہائی اسکول سے شاذیہ افروز کو مولوی جعفر صاحب ایوارڈ ، اسلامیہ ہائی اسکول کی طالبہ عائشہ بیگم کو حضرت حاجی صاحب قبلہؒ ، انتصار گنج ہائی اسکول ٹاپر اسماء بیگم کومحمد احمد علی شجاعت شمسی ایوارڈ ، گورنمنٹ TPT ہنمکنڈہ کے ٹاپر محمد خواجہ احمد محی الدین کو عبدالرحیم اصغر ایوارڈ ، گورنمنٹ پٹرول پمپ اسکول سے آفرین ناز کو مرحوم محمد عبدالقادر ایڈوکیٹ چیرمین اسلامیہ ایجوکیشنل سوسائٹی کے اعزاز سے ، جبکہ نعمانیہ اسکول سے شاہین سرور کو اور گورنمنٹ ہائی اسکول شمعون پیٹ اسکول سے محمد منصور کو نمایاں دسویں جماعت میں کامیابی پر ایوارڈز سے نوازا گیا ۔ جس میں یادگار مومنٹو کی پیشکشی و شال پوشی اور ایک ہزار نقد رقم دی گئی ۔ جلسہ کی تقریب کا آغاز محمد خواجہ احمد محی الدین طالب علم TPT کی قرات سے ہوا ۔ بارگاہ ایزدی میں حمد باری تعالیٰ بلقیس بانو شاہین معلم اسکول اسسٹنٹ آرٹس نے پیش کی ۔ نعت شریف سنانے کی سعادت اسماء ، عطیہ و آفرین ، سمرین ، آمنہ ، سیدہ سمرین اور سیدہ آفرین نے حاصل کی ۔ اس تقریب کو کامیاب بنانے میں الفیضان کے ذمہ داران جناب محمد قادر علی ، محمد اقبال کوثر ، محمد چاند بھائی ، محمد سراج الدین قادری ، جناب محمد شرف الدین محمودی ، جناب خواجہ حسن شریف سکریٹری محبوبیہ پنجتن سوسائٹی ، جناب خلیق الزماں ، مقصود الرحمن کے علاوہ دیگر ارکان نے سرگرم رول ادا کیا ۔ نظامت کے فرائض جناب محمد عبدالنعیم اسٹاف رپورٹر ضلع ورنگل روزنامہ سیاست نے عمدگی سے انجام دئیے ۔ اظہار تشکر جناب محمد شرف الدین محمودی اسکول اسسٹنٹ فزیکل سائنس نے ادا کیا ۔ 2 ہزار نوٹ بکس کے پیاکٹس طلباء میں تقسیم کئے گئے ۔ اس موقع پر کثیر تعداد میں اساتذہ و طلباء نے شرکت کی ۔۔

TOPPOPULARRECENT