Monday , November 20 2017
Home / شہر کی خبریں / تعلیم کا مقصد مسائل کا حل اور سوسائٹی کی خدمت

تعلیم کا مقصد مسائل کا حل اور سوسائٹی کی خدمت

وتیا ساکشرتا ابھیان کے تحت اردو یونیورسٹی کے ایک ماہ طویل پروگرام کا اختتام
حیدرآباد، 13؍جنوری (پریس نوٹ) مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی میں کل ایک ماہ طویل وتیا ساکشرتا ابھیان کا اختتامی جلسہ کا انعقاد عمل میں آیا۔ مہمانِ خصوصی ڈاکٹر شکیل احمد، پرو وائس چانسلرنے کہا کہ تعلیم کا مقصد ہی سوسائٹی کی خدمت ہے۔ ضرورت مندوں تک پہنچنا اور ان کے مسائل کو حل کرنا بھی تعلیم کے مقاصد میں شامل ہے۔ اس سے گائوں اور یونیورسٹی کا رشتہ مضبوط ہو رہا ہے۔ دونوں ایک دوسرے سے قریب آرہے ہیں اور اس ایک مہینہ کی مدت میں اردو یونیورسٹی کی این ایس ایس ٹیم اور رضاکاروں نے جس طرح سے وتیا ساکشرتا ابھیان (وشاکھا) چلایا ہے۔ وہ قابل تعریف ہے۔ یونیورسٹی گائوں جائے اور گائوں والے یونیورسٹی سے جڑیں، اس سے سماج کی ترقی ہوگی۔ یونیورسٹی کے دیگر پروگرام میں بھی گائوں کی نمائندگی ضروری ہے۔ اس سے دو طرفہ ترسیل ہوگی۔ یہ تعلق دیرپا قائم رہے گا۔ اس میں رکاوٹ نہیں آنی چاہئے۔پروفیسر ایچ خدیجہ بیگم، صدر شعبۂ تعلیم و تربیت نے صدارت کی۔ واضح رہے کہ مولانا آزاد نیشنل اردو یونیورسٹی اُنّت بھارت ابھیان کے تحت گذشتہ ایک سال کے دوران دو گائووں کو گود لے چکی ہے اور وہاں ترقیاتی کام کر رہی ہے۔ وزارت فروغ انسانی وسائل کی جانب سے جاری حالیہ وتیا ساکشرتاابھیان کے تحت 12؍ دسمبر سے 12 جنوری تک نارسنگی اور منچرولا گائووں میں ایک ماہ تک یونیورسٹی کے این ایس ایس رضا کاروں نے مختلف پروگراموں میں بڑھ چڑھ کر حصہ لیا اور گائوں کے لوگوں کے مسائل کا حل پیش کیا گیا۔ نارسنگی گائوں کی آبادی 9.5 ہزار ہے یہاں ہر جمعہ کو مویشی میلہ لگتا ہے اور یہاں سے کئی پہلوانوں نے ریاستی اور قومی سطح کے کشتی مقابلوں میں نمائندگی کی ہے۔ اس پراجیکٹ کے اختتام پر اردو یونیورسٹی کے سی پی ڈی یو ایم ٹی آڈیٹوریم میں یہ تقریب منعقد کی گئی۔ پروگرام کی کاروائی ڈاکٹر محمد فریاد، این ایس ایس کو آرڈینیٹر نے چلائی۔ پروفیسر سنیم فاطمہ نے ایک ماہی مہم کی مختصر رپورٹ پیش کی۔ گائوں سے آنے والے مہمانوں میں یادگاری تحفے اور شال پیش کی گئی۔ اس موقع پر ڈاکٹر اسرار عالم، وسیم راجہ ، بھکشا پتی، محمد اقبال اور دیگر رضاکار وں کے علاوہ طلبہ اور اساتذہ کی بڑی تعداد موجود تھی۔ ڈاکٹر اسرار عالم نے کلمات تشکر ادا کیے۔

TOPPOPULARRECENT